پاک فوج نے ایک آپریشن میں 4 مغوی ایرانی فوجیوں کو بازیاب کرالیا     No IMG     دنیا بھر میں آج ہندو برادری اپنا مذہبی تہوار ہولی منا رہی ہے     No IMG     افغانستان کے صوبے ہرات میں سیلاب سے 13 افراد کے جاں بحق ہونے سے ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 63 ہوگئی     No IMG     لیبیا میں پناہ گزینوں کو لے جانے والی کشتی ڈوب گئی جس کے نتیجے میں 9 افراد ہلاک     No IMG     اسرائیلی دہشت گردی، غرب اردن میں مزید3 فلسطینیوں کو شہید کردیا     No IMG     پیپلز پارٹی کےچیئرمین نے 3 وفاقی وزرا کو فارغ کرنے کا مطالبہ کردیا     No IMG     وزیراعظم عمران خان کی ہولی کے تہوار پر ہندو برادی کو مبارک باد     No IMG     سابق وزیراعظم نوازشریف نے ای سی ایل سے نام نکالنے کی درخواست دائر کردی     No IMG     سمجھوتہ ایکسپریس کیس کا فیصلہ 12 سال بعد بھی تاخیر کا شکار     No IMG     وزیر اعظم آئین کے آرٹیکل 214 کی شق دو اے پر عمل کرنے میں ناکام     No IMG     روس کے وزیر دفاع سرگئی شویگو نے شام کے صدر بشار اسد سے ملاقات     No IMG     بھارت اور پاکستان متنازع معاملات مذاکرات کے مذاکرات کے ذریعے حل کریں,چین     No IMG     بریگزیٹ پرٹریزامے کی حکمت عملی انتہائی کمزورہے، ٹرمپ     No IMG     امریکی وزیر خارجہ مائیک پمپئو کی کویت کے بادشاہ سے ملاقات     No IMG     نیوزی لینڈ میں جمعہ کو سرکاری ریڈیو اور ٹی وی سے براہ راست اذان نشر ہوگی,جیسنڈا آرڈرن     No IMG    

وزیراعظم عمران خان کی سعودی فرمانروا اور ولی عہد سے ملاقاتیں
تاریخ :   19-09-2018

الریاض ( ورلڈ فاسٹ نیوزفاریو ) پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان نے اپنے دورہٴ سعودی عرب میں سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز اور ولی عہد محمد بن سلمان سے ملاقات کی ہے۔دورہ سعودی عرب کے دوسرے روز وزیر اعظم عمران خان شاہی محل پہنچے تو ان کا پرتپاک استقبال کیا گیا۔ وزیر اعظم

کو گارڈ آف آنر بھی پیش کیا گیا۔سرکاری ذرائع کے مطابق، وزیر اعظم نے خادمین الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے ملاقات کے دوران دوطرفہ معاشی تعلقات، باہمی دلچسپی کے امور، امت مسلمہ کو درپیش چیلنجوں اور اقتصادی تعاون میں مزید وسعت سمیت دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا۔وزیر اعظم اور ان کے وفد نے اعلیٰ سعودی حکام سے بھی ملاقاتیں کیں۔سعودی وزیر توانائی خالد الفالح اور صدر سعودی انوسٹمنٹ فنڈ اور دیگر سے ملاقات کے دوران وزیر اعظم عمران خان کے ہمراہ وزیر خزانہ اسد عمر، مشیر تجارت عبدالرزاق داوٴد، سیکرٹری خارجہ اور سعودی عرب میں پاکستان کے سفیر خان ہشام بن صدیق بھی موجود تھے۔ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور، دوطرفہ تعلقات، تجارت، سرمایہ کاری اور اقتصادی تعلقات کے امور پر تبادلہٴ خیال کیا گیا۔ دونوں ممالک کے درمیان تجارتی رابطے مزید بہتر کرنے پر بھی غورکیا گیا۔ملاقات کے دوران سعودی وزیر نے وزیر اعظم سے خانہ کعبہ کے اندر جانے کے تجربے سے متعلق پوچھا تو انہوں نے جواب دیا کہ یہ ہمارا پہلا اور بہترین دورہ ہے۔وزیر اعظم عمران خان سے اسلامی تعاون تنظیم کے سیکریٹری جنرل ڈاکٹر یوسف العثیمین نے بھی ملاقات کی۔ ملاقات کے دوران وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی، سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ اور پاکستانی سفیر ہشام بن صدیق موجود تھے۔ اس موقع پر باہمی دلچسپی کے امور اور مسلم امہ کو درپیش چیلنجوں پر گفتگو کی گئی۔وزیر اعظم عمران خان نے سعودی فرمانروا کے علاوہ سعودی وزیر دفاع اور ولی عہد محمد بن سلمان سے بھی ملاقات کی جس میں دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کے حوالے سے بات چیت کی گئی، محمد بن سلمان سعودی فرمانروا کے بعد سب سے اہم شخصیت مانے جاتے ہیں اور گذشتہ کچھ عرصہ میں عملی طور پر محمد بن سلمان ہی تمام اہم فیصلوں میں نظر آتے ہیں۔جدہ کے شاہ فیصل محل میں سعودی عرب میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کے ارکان سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ اوورسیز وزارت اس انداز میں تشکیل دی جائے گی کہ یہ صحیح معنوں میں پاکستانیوں اور سرمایہ کاروں کی خدمت کر سکے اور ان کے مسائل کو حل کرنے کی کوشش کرے، اوورسیز پاکستانیوں میں بڑی صلاحیت ہے اور ھم ان کی صلاحیتوں سے بھرپور فائدہ حاصل کریں گے۔سعودی عرب کے دورہ کے بعد وزیر اعظم عمران خان اور ان کا وفد متحدہ عرب امارات پہنچا جہاں ائیرپورٹ پر متحدہ عرب امارات کے ولی عہد شیخ محمد بن زید النیہان نے ان کا استقبال کیا۔ عمران خان شاہی محل پہنچے جہاں انہوں نے متحدہ عرب امارات کے ولی عہد سے تفصیلی گفت گو کی۔ اس موقع پر ملاقات میں عرب امارات کے نائب وزیر اعظم اور وزیر داخلہ، وزیرِ خارجہ، نیشنل سیکیورٹی ایڈوائزر، وزیر برائے صدارتی امور موجود تھے۔ان ملاقاتوں کے دوران دونوں ممالک کے ایک دوسرے کے ساتھ تعلقات کے فروغ کے حوالے سے بات چیت کی گئی۔پاکستان اور متحدہ عرب امارات کے درمیان گذشتہ کچھ عرصہ میں تعلقات کشیدہ رہے جس وقت یمن میں فوج نہ بھجوانے کے معاملہ پر اماراتی وزیر نے پاکستان کے حوالے سے سخت بیان دیا جس پر اس وقت کے وزیر داخلہ چوہدری نثار نے پریس کانفرنس میں سخت جواب دیا جس کے بعد دونوں ممالک کے درمیان تعلقات سرد مہری کا شکار تھے۔وزیر اعظم عمران خان اپنے اس دو روزہ دورہ کے بعد پاکستان روانہ ہوگئے ہیں۔اس دورہ کے دوران پاکستان کو کوئی مالی معاونت حاصل ہوئی یا سعودی عرب کی طرف سے کوئی یقین دہانی کروائی گئی، اس حوالے سے تاحال کوئی تفصیل سامنے نہیں آ سکی۔ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر فیصل سے بدھ کے روز جب اس بارے میں سوال کیا گیا تو انہوں نے بھی مکمل لاعلمی کا اظہار کیا۔

Print Friendly, PDF & Email
ریلوے کا ٹکٹوں میں اضافے کا فیصلہ
انڈیا نے پاکستان کو8 وکٹوں سے شکست دے دی
Translate News »