پاک فوج نے ایک آپریشن میں 4 مغوی ایرانی فوجیوں کو بازیاب کرالیا     No IMG     دنیا بھر میں آج ہندو برادری اپنا مذہبی تہوار ہولی منا رہی ہے     No IMG     افغانستان کے صوبے ہرات میں سیلاب سے 13 افراد کے جاں بحق ہونے سے ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 63 ہوگئی     No IMG     لیبیا میں پناہ گزینوں کو لے جانے والی کشتی ڈوب گئی جس کے نتیجے میں 9 افراد ہلاک     No IMG     اسرائیلی دہشت گردی، غرب اردن میں مزید3 فلسطینیوں کو شہید کردیا     No IMG     پیپلز پارٹی کےچیئرمین نے 3 وفاقی وزرا کو فارغ کرنے کا مطالبہ کردیا     No IMG     وزیراعظم عمران خان کی ہولی کے تہوار پر ہندو برادی کو مبارک باد     No IMG     سابق وزیراعظم نوازشریف نے ای سی ایل سے نام نکالنے کی درخواست دائر کردی     No IMG     سمجھوتہ ایکسپریس کیس کا فیصلہ 12 سال بعد بھی تاخیر کا شکار     No IMG     وزیر اعظم آئین کے آرٹیکل 214 کی شق دو اے پر عمل کرنے میں ناکام     No IMG     روس کے وزیر دفاع سرگئی شویگو نے شام کے صدر بشار اسد سے ملاقات     No IMG     بھارت اور پاکستان متنازع معاملات مذاکرات کے مذاکرات کے ذریعے حل کریں,چین     No IMG     بریگزیٹ پرٹریزامے کی حکمت عملی انتہائی کمزورہے، ٹرمپ     No IMG     امریکی وزیر خارجہ مائیک پمپئو کی کویت کے بادشاہ سے ملاقات     No IMG     نیوزی لینڈ میں جمعہ کو سرکاری ریڈیو اور ٹی وی سے براہ راست اذان نشر ہوگی,جیسنڈا آرڈرن     No IMG    

ورلڈ الیون اور پاکستان کا سنسنی خیز ہاکی میچ برابر
تاریخ :   21-01-2018

ورلڈ الیون اور پاکستان (ورلڈ فاسٹ نیوز فار یو) کی ہاکی ٹیموں کے درمیان دوسرا میچ لاہور میں 3-3 گول سے برابر رہا جس کے بعد مہمان ٹیم نے دو میچ پر مشتمل سیریز ایک صفر سے جیت لی ہے۔اتوار کو دنیا کے سب سے بڑے ہاکی اسٹڈیم (نینشل ہاکی اسٹڈیم) میں کھیلے گئے میچ کو دیکھنے کے لیے تماشائیوں کی بڑی تعداد موجود تھی۔ ہالینڈ، اسپین، جرمنی، نیوزی لینڈ، آسٹریلیا اور اولمپک چمپئن ارجنٹینا کے کھلاڑیوں پر مشتمل ورلڈ الیون نے میچ میں تین بار برتری حاصل کی، جسے پاکستانی کھلاڑیوں نے ہر بار ختم کیا۔

کھیل ختم ہونے سے صرف دو منٹ پہلے پاکستانی کھلاڑی نوید عالم نے ایشین ہاکی کا شاندار مظاہرہ کرتے ہوئے مخالف ٹیم کے پانچ کھلاڑیوں کو ڈاج دیا اور گیند گول میچ پہنچا کر اپنی ٹیم کو یقینی شکست سے بچایا لیا۔

اس سے قبل نوجوان کھلاڑیوں پر متشمل پاکستانی ٹیم نے کھیل کی ابتدا جارحانہ انداز سے کی لیکن فارورڈ لائن نے گول کرنے کے متعدد مواقع یکے بعد دیگرے ضائع کیے۔

میچ میں دو گول کرنے والے ورلڈ الیون کے کپتان روڈرک نے دوسرے کوارٹر کے اختتام قبل سے اسکور کی ابتدا خوبصورت فیلڈ گول سے کی۔ تیسرا کوارٹر انتہائی دلچسپ رہا جس کے دوسرے منٹ میں پاکستانی کھلاڑی عدیل لطیف نے گول کرکے اسکور 1-1 سے برابر کر دیا۔ چار منٹ بعد ورلڈ الیون کو نیولساسز کے گول کے ذریعہ ملنے والی برتری کو گرین شرٹس کے رضوان علی نے ختم کر دیا۔

اس موقع پر ہال آف فیم میں شامل ہونے کے لیے پاکستان آنے والے کھلاڑی ہالینڈ کے فلورس جان بولینڈر، پال لیجن ،جرمنی کے کرسٹئین بلنک تماشایوں میں گھل مل گئے اور انہوں نے اپنے پرستاروں کے ہمراہ سیلفیاں بنوائیں۔ ماضی کے ان عظیم کھلاڑیوں کو پاکستان ہاکی ہال آف فیم میں شامل ہونے پر تین تین ہزار ڈالر کے انعامی چیک بھی پیش کیے گئے۔ پاکستان کی طرف سے سابق کپتانوں، اصلاح الدین، سمیع اللہ، شہناز شیخ، اختر رسول اور شہباز کو بھی اس اعزاز سے نوازا گیا ہے۔

فلورس بولینڈر چوبیس برس بعد پاکستان آنے پر بے حد خوش تھے ۔ بوولینڈر نے 1990ء کے عالمی کپ ہاکی ٹورنامنٹ کے نیشنل ہاکی اسٹیڈیم لاہور میں کھیلے گئے فائنل میں پنالٹی کارنر پر دو گول کرکے ہالینڈ کو چیمپیئن بنوایا تھا۔ اتوار کی دوپہر میچ سے قبل اسی میدان پر ان کی 52 ویں سالگرہ کا کیک بھی کاٹا گیا۔

بوولینڈر نے ڈوئچے ویلے کو بتایا کہ ان کی لاہور سے بڑی خوشگوار یادیں وابستہ ہیں۔ ورلڈ الیون کی پاکستان آمد اس ملک میں ہاکی کے احیاء کی جانب ایک اہم قدم ہے۔ بوولینڈر کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان کو ہاکی میں آنے والی تبدیلیوں کے مطابق خود کو بدلنا ہوگا۔ ان کے بقول اتنے برسوں میں بہت کچھ بدل گیا ہے۔ ‘میں خود کتنا بدل گیا ہوں اس لیے آپ کو بھی اپنے کھیل کے انداز کو بدلنا ہوگا‘۔

کرسچئین بلنک کا کہنا تھا کہ ‘پاکستان ہاکی کے دلدادہ لوگوں کا دیس ہے یہاں واپس آکر ایسے لگ رہا ہے جیسے گھر لوٹ آیا ہوں‘۔ بلنک نے پاکستانی مہمان نوازی کو سراہا اور کہا کہ اب یہاں بین لاقوامی ہاکی کی واپسی میں کوئی رکاوٹ نہیں رہ گئی۔

سابق پاکستانی اولمپیئن ایاز محمود نے ڈی ڈبلیو کو بتایا کہ ورلڈ الیون کا دورہ پاکستان میں ہاکی کی واپسی کی جانب ایک سنجیدہ کوشش ہے۔ ان کا کہنا تھا، ’’ہم نے دنیا کو پیغام دیا ہے کہ پاکستانی اچھے میزبان ہیں اور یہ کھیل کے لیے پر امن ملک ہے۔‘‘

ایاز محمود کے مطابق ہاکی میں پاکستان میں نے سب سے پہلے ورلڈ کپ اور چیمپیئنز ٹرافی عطیہ کی تھی اور ’آج ہم نے ہال آف فیم متعارف کراکے دنیائے ہاکی کو نئے ٹرینڈ دینے کی اپنی روایت برقرار رکھی ہے‘۔ انہوں نے کہا کہ ورلڈ الیون کے خلاف کھیلنے والی پاکستانی ہاکی ٹیم نوجوان کھلاڑیوں پر مشتمل تھی اور اس کے شاندار کھیل نے ثابت کر دیا کہ پاکستان ہاکی میں فائٹ بیک کرنے صلاحیت بھی موجود ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
امریکا سرد جنگ کی سوچ ترک کرے,چین کی وزارتِ دفاع کے ترجمان
سابق نائب وزیراعظم چودھری پرویزالٰہی نے کہا ہے کہ سپریم کورٹ پنجاب میں جعلی پولیس مقابلے کرانے اور کرنے والوں سے بھی حساب لے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Translate News »