محکمہ موسمیات کی پیش گوئی 19سے 26فروری تک ملک بھر میں بارشوں کی نیا سلسلہ شروع ہونے والا ہے     No IMG     وزیراعظم عمران خان کا سعودی عرب میں مقیم پاکستانیوں کیلئے بڑا مطالبہ     No IMG     حکمرانوں کے تمام حلقے کشمیر کے معاملے پر خاموش ہیں, مولانا فضل الرحمان     No IMG     پاکستان, میں 20ارب ڈالرز کی سرمایہ کاری کا پہلا مرحلہ مکمل ہوگیا: سعودی ولی عہد     No IMG     لاہور قلندرز 78 رنز پر ڈھیر     No IMG     ابو ظہبی میں ہتھیاروں کے بین الاقوامی میلے کا آغاز     No IMG     برطانوی ہوائی کمپنی (Flybmi) دیوالیہ، سینکڑوں مسافروں کو پریشانی     No IMG     یورپ میں قانونی طریقے سے داخل ہونے والے افراد کی طرف سے سیاسی پناہ کی درخواستیں دیے جانے کا رجحان بڑھ رہا ہے     No IMG     ٹرین کے ٹائلٹ میں پستول، سینکڑوں مسافر اتار لیے گئے     No IMG     یورپی یونین ,کے پاسپورٹوں کا کاروبار ’ایک خطرناک پیش رفت     No IMG     بھارت نے کشمیری حریت رہنماؤں کو دی گئی سیکیورٹی اورتمام سرکاری سہولتیں واپس لے لی     No IMG     پی ایس ایل کے چھٹے میچ میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے اسلام آباد یونائیٹڈ کو 7وکٹوں سے شکست دےدی     No IMG     وزیرخارجہ کا ایرانی ہم منصب کو ٹیلیفون     No IMG     سعودی ولی عہد کا پاکستان میں تاریخی اور پُرتپاک استقبال     No IMG     پاکستان ,کو زاہدان کے دہشتگردانہ حملے کا جواب دینا ہوگا، ایران     No IMG    

نواز شریف کی احتساب عدالت میں تینوں ریفررنسز یکجا کرنے کی درخواست دوبارہ مسترد کردی گئی
تاریخ :   08-11-2017

سلام آباد(ورلڈ فاسٹ نیوز فار یو) سابق وزیراعظم نواز شریف کی جانب سے احتساب عدالت میں تینوں ریفررنسز یکجا کرنے کی درخواست دوسری مرتبہ مسترد کردی گئی ہے-نوازشریف نے نیب کی جانب سے دائر فلیگ شپ انویسٹمنٹ ‘ایون فیلڈ اور العزیزیہ کمپنی کے تینوں ریفررنسزکو یکجا کرکے سننے کے لیے ہائی کورٹ سے رجوع کیا تھا اور ہائی کورٹ کی ہدایات کی روشنی میں احتساب عدالت نے شریف خاندان کی درخواستوں کو دوبارہ سننے کے بعد فیصلہ سنادیا ہے-درخواست مسترد کیئے جانے کے بعد نوازشریف کو کٹہرے میں بلایا گیا اور تینوں ریفررنسوں پر فردجرم الگ الگ پڑھ کر سنائی گئیں اس سے قبل نوازشریف پر فرد جرم ان کی غیرموجودگی میں نمائندے ظافرخان ایڈوکیٹ کی موجودگی میں عائد کی گئی تھی -آج باضابط طور پر انہیں فردجرم کے بارے میں آگاہ کیا گیا جس پر نوازشریف نے صحت جرم سے انکار کردیا ہے-نوازشریف تقریبا آدھے گھنٹے تک کٹہرے میں کھڑے رہے انہوں نے عدالت سے پوچھا کہ 6ماہ میں تینوں ریفررنسزکو کیسے نمٹایا جائے گا نوازشریف نے اپنے خلاف تینوں ریفررنسزکو سیاسی قراردیا انہوں نے کہا کہ ان کے خلاف کیس بدنیتی اور سیاسی بنیادوں پر قائم کیئے گئے ہیں- اس کاروائی کے بعد آج سے باقاعدہ ٹرائل شروع ہوگیا ہے‘نوازشریف کے اعتراضات کو بھی فرد جرم کا حصہ بنادیا گیا ہے-عدالت نے مریم صفدر اور کیپٹن صفدر کی فرد جرم میں ترمیم کی گئی ہے تاہم ان کے خلاف کاروائی روکنے کی درخواست مسترد کردی گئی ہے-احتساب عدالت کیس کی سماعت 15نومبر تک ملتوی کردی ہے-قانونی ماہرین کا کہنا ہے کہ شریف خاندان وقت حاصل کرنے اور کیس کو لٹکانے کے لیے مختلف ہتھکنڈے استعمال کرنے کی کوشش کررہا تھا جس کی وجہ سے ٹرائل شروع ہونے میں تاخیر ہوئی -قبل ازیں نوازشریف ،ان کی صاحبزادی مریم صفدر اور داماد کیپٹن صفدراحتساب عدالت میں پیش ہوگئے ہیں،سابق وزیراعظم نواز شریف کی تینوں نیب ریفرنس یکجا کرنے کی درخواست پر محفوظ فیصلہ آج سنایا گیا۔اس موقع پر فیڈرل جوڈیشل کمپلیکس کے باہرسیکورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے ہیں۔احتساب عدالت کے جج محمد بشیرنیب ریفرنسز کی سماعت کررہے ہیں۔گزشتہ روز احتساب عدالت اسلام آباد نے سابق وزیر اعظم نواز شریف کی طرف سے3ریفرنسز کو یکجا کرکے مشترکہ ٹرائل چلانے کی درخواست پر گزشتہ روز سماعت کی تھی۔نواز شریف کے وکیل خواجہ حارث کا دلائل میں کہنا تھا کہ تینوں ریفرنسز میں آمدن سے زائد اثاثے بنانے کا الزام ہے، تمام ریفرنسز ایک ہی انکوائری اور تفتیش کے نتیجے میں بنائے گئے، بعض گواہان بھی مشترک ہیں، اس لئے انہیں یکجا کر کے ایک ریفرنس بنایا جائے اور ایک ہی فرد جرم عائد کیا جائے۔ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل نیب مظفر عباسی نے دلائل میں کہا تھا کہ تمام ریفرنسز میں ملزمان کے کردار مختلف ہیں، ٹرانزیکشنز بھی مختلف ہیں، ایک سے زائد ملزمان پر نیب آرڈیننس کی سیکشن17ڈی کا اطلاق نہیں ہوتا۔گزشتہ سماعت میں مریم نواز اورکیپٹن ریٹائرڈ صفدر نےاحتساب عدالت میں ایک متفرق درخواست بھی دائر کی تھی جس میں کہا گیا ہے کہ کیلبری فونٹ سے متعلق دستاویز جعلی ثابت ہونے تک اس الزام کو فرد جرم سے نکالا جائے۔واضح رہے کہ عدالت نے نواز شریف پر العزیزیہ اسٹیل ملز اور ہل میٹل اسٹیبلشمنٹ کے حوالے سے دائر علیحدہ ریفرنسز میں فرد جرم عائد کی تھی۔فلیگ شپ انویسٹمنٹ ‘ایون فیلڈ اور العزیزیہ کمپنی کے تینوں ریفررنسزمیں نوازشریف‘ان کے دونوں صاحبزادے حسن نواز‘حسین نواز ‘نوازشریف کی صاحبزادی مریم صفدر اور داماد کیپٹن صفدر کے خلاف ریفررنسزدائر کیئے گئے تھے-ان ریفررنسزمیں احتساب عدالت نے حسن نوازاور حسین نوازکو عدالت میں پیش نہ ہونے پر اشتہاری قراردینے کی کاروائی کرنے کا حکم دے رکھا ہے-اس سے پہلے بھی احتساب عدالت نے 19 اکتوبر کو تینوں ریفرنسز کو یکجا کرنے کی درخواستوں کو مسترد کردیا تھا جس پر نواز شریف نے اسلام آباد ہائی کورٹ سے رجوع کیا جس نے 2 نومبر کو احتساب عدالت کو اپنے فیصلے پر نظرثانی کرنے کا حکم دیا تھا۔واضح رہے کہ سپریم کورٹ نے 28 جولائی کو پاناما لیکس مقدمے میں نواز شریف کو نااہل قرار دیتے ہوئے نیب کو ان کے خلاف ریفرنس دائر کرنے کا حکم دیا تھا۔ نیب نے 8 ستمبر کو نوازشریف اور ان کے بچوں کے خلاف لندن فلیٹس، آف شورکمپنیوں، عزیزیہ اسٹیل اور ہل میٹل کمپنی سے متعلق 3 مقدمات درج کیے۔ان مقدمات میں نیب آرڈیننس کی سیکشن 9 اے لگائی گئی ہے جو آمدن سے اثاثے بنانے، غیرقانونی رقوم اور تحائف کی ترسیل سے متعلق ہے۔ جرم ثابت ہونے کی صورت میں ملزمان کو 14 سال قید کی سزا ہوسکتی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
ججز بغض سے بھرے پڑے ہیں اور انکا بغض اور غصہ انکے الفاظ کی صورت میں سامنے آ گیا ہے۔, میاں محمد نواز شریف
امریکی سفیر نکی ہیلی نے کہا ہے کہ حوثی باغیوں کو میزائل فراہم کرنے پر ایران کے خلاف ایکشن لینا چاہیے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Translate News »