دنیا بھر میں آج ہندو برادری اپنا مذہبی تہوار ہولی منا رہی ہے     No IMG     افغانستان کے صوبے ہرات میں سیلاب سے 13 افراد کے جاں بحق ہونے سے ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 63 ہوگئی     No IMG     لیبیا میں پناہ گزینوں کو لے جانے والی کشتی ڈوب گئی جس کے نتیجے میں 9 افراد ہلاک     No IMG     اسرائیلی دہشت گردی، غرب اردن میں مزید3 فلسطینیوں کو شہید کردیا     No IMG     پیپلز پارٹی کےچیئرمین نے 3 وفاقی وزرا کو فارغ کرنے کا مطالبہ کردیا     No IMG     وزیراعظم عمران خان کی ہولی کے تہوار پر ہندو برادی کو مبارک باد     No IMG     سابق وزیراعظم نوازشریف نے ای سی ایل سے نام نکالنے کی درخواست دائر کردی     No IMG     سمجھوتہ ایکسپریس کیس کا فیصلہ 12 سال بعد بھی تاخیر کا شکار     No IMG     وزیر اعظم آئین کے آرٹیکل 214 کی شق دو اے پر عمل کرنے میں ناکام     No IMG     روس کے وزیر دفاع سرگئی شویگو نے شام کے صدر بشار اسد سے ملاقات     No IMG     بھارت اور پاکستان متنازع معاملات مذاکرات کے مذاکرات کے ذریعے حل کریں,چین     No IMG     بریگزیٹ پرٹریزامے کی حکمت عملی انتہائی کمزورہے، ٹرمپ     No IMG     امریکی وزیر خارجہ مائیک پمپئو کی کویت کے بادشاہ سے ملاقات     No IMG     نیوزی لینڈ میں جمعہ کو سرکاری ریڈیو اور ٹی وی سے براہ راست اذان نشر ہوگی,جیسنڈا آرڈرن     No IMG     جھوٹی گواہی دینے پر کاروائی کی جائے گی،عدالتیں جھوٹے گواہ کے خلاف کسی قسم کی لچک نہ دکھائیں,۔چیف جسٹس آف پاکستان     No IMG    

لاؤس میں زیر تعمیر ڈیم کے ٹوٹنے سے پانی دیہاتوں میں داخل ہوگیا ہے جس کے نتیجے میں 100 سے زائد افراد لاپتہ اور درجنوں گاؤں زیر آب آگئے
تاریخ :   24-07-2018

لاؤس  ۔( ورلڈفاسٹ نیوزفاریو) میں زیر تعمیر ڈیم کے ٹوٹنے سے پانی دیہاتوں میں داخل ہوگیا ہے جس کے نتیجے میں 100 سے زائد افراد لاپتہ اور درجنوں گاؤں زیر آب آگئے ہیں۔ اطلاعات کے مطابق جنوب مشرقی ایشیائی ملک لاؤس کے صوبے اتاپیو میں واقع  زیرتعمیر ہائیڈرو الیکٹرک ڈیم ٹوٹنے سے 5 بلین کیوبک پانی 6 دیہاتوں کو اپنے ساتھ بہا لے گیا۔

سیلاب کے باعث 100 سے زائد افراد لاپتہ جب کہ 6 ہزار 6 سو افراد بے گھر ہوگئے، لاپتہ افراد کے ہلاک ہوجانے کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے۔ سیلاب کے باعث تاحد نگاہ پانی ہی پانی ہے جس کی وجہ سے لوگوں نے چھتوں پر پناہ لے رکھی ہے۔ ریسکیو اداروں کو متاثرہ علاقے تک پہنچنے کے لیے شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ ہیلی کاپٹرز کی مدد سے سیلاب میں پھنسے افراد کی محفوظ علاقے میں منتقلی کا عمل جاری ہے۔ یان شی نامونے ڈیم پر 410 میگا واٹ بجلی پیدا کرنے کے لیے پاور اسٹیشن قائم کیا جا رہا تھا جس کے لیے  1.2 بلین ڈالر کے پروجیکٹ کا آغاز 2013ء میں کیا گیا تھا اور جسے 2019ء میں مکمل ہونا تھا۔

اس پاور پلانٹ سے حاصل ہونے والی 90 فیصد بجلی تھائی لینڈ کو فروخت کی جانی تھی جب کہ بقیہ ماندہ بجلی کو مقامی گرڈ اسٹیشن میں شامل کیا جانا تھا۔ ڈیم پر قائم پاور پلانٹ کی تعمیر کے خلاف مقامی این جی اوز اور ماحولیاتی تنظیموں نے اپنے خدشات کا اظہار کرتے ہوئے اسے مقامی آبادی کے لیے خطرہ قرار دیا تھا جس سے مقامی آبادی کو پانی کی قلت کا بھی سامنا ہوسکتا تھا۔ اس پاور اسٹیشن پر کام کرنے والی کمپنیوں کا تعلق تھائی لینڈ اور شمالی کوریا سے ہے جب کہ ایک مقامی کمپنی بھی شامل ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اپنے مخالفین سے ’بدلہ‘ لینا چاہتے ہیں
امریکہ کا ترکی کو ایف 35 طیارے نہ دینے کا اعلان
Translate News »