چودھری پرویزالٰہی سے فردوس عاشق اعوان کی ملاقات     No IMG     یوکرین کے مزاحیہ اداکار ملک کے صدر منتخب     No IMG     وزیروں کو نکالنے سے سلیکٹڈ وزیراعظم کی نااہلی نہیں چھپے گی, بلاول بھٹو زرداری     No IMG     ایران کے صدر حسن روحانی نے تہران میں سعد آباد محل میں پاکستانی وزیر اعظم عمران خان کا باقاعدہ اور سرکاری طور پر استقبال     No IMG     بھارت اور چین کے مابین پیر کے روز بیجنگ میں باہمی فیصلہ کن مذاکرات کا آغاز     No IMG     بھارتی وزیر اعظم,ہمارا پائلٹ واپس نہ کیا جاتا تو اگلی رات خون خرابے کی ہوتی     No IMG     ملکی سیاسی پارٹیاں ووٹ تو غریبوں ،محنت کشوں کے نام پر لیتی ہیں مگر تحفظ جاگیرداروں اور مافیاز کو دیتی ہیں ,جواد احمد     No IMG     افغان سپریم کورٹ نے صدر کے انتخاب تک صدر اشرف غنی کی مدت صدارت میں توسیع کردی     No IMG     آزاد کشمیر میں منڈا بانڈی کے مقام پر ایک جیپ کھائی میں گرنے سے 5 افراد ہلاک     No IMG     مصرمیں صدرکےاختیارات میں اضافے کےلیے ہونےوالے تین روزہ ریفرنڈم میں ووٹ ڈالنےکا سلسلہ جاری ہے     No IMG     لاہور میں 3 منزلہ خستہ حال گھر زمین بوس ہونے کے نتیجے میں خاتون سمیت 6 افراد جاں بحق جبکہ 4 افراد زخمی     No IMG     وزیراعظم عمران خان ایران کے پہلے سرکاری دورے پر تہران پہنچ گئے     No IMG     سری لنکا میں کل ہونے والے آٹھ بم دھماکوں کے نتیجے میں 300 افراد ہلاک اور 500 زخمی     No IMG     وزیراعظم عمران خان نے مکران کوسٹل ہائی وے پر دہشت گردی کی سخت مذمت کرتے ہوئے حکام سے واقعے پر رپورٹ طلب کر لی     No IMG     افغانستان اور افغان طالبان کے درمیان مذاکرات ایک مرتبہ پھر کھٹائی میں پڑتے دکھائی دے رہے ہیں     No IMG    

غزہ اقوام متحدہ ایجنسی کے فلسطینی ملازمین کی جبری برطرفیوں کے خلاف ہڑتال
تاریخ :   24-09-2018

غزہ ( ورلڈ فاسٹ نیوزفاریو ) غزہ میں اقوام متحد ہ کے تحت فلسطینی مہاجرین کی امدادی ایجنسی اُنرو ا کے ہزاروں ملازمین نے جبری برطرفیوں اور امریکی امداد کی کٹوتی کے خلاف ہڑتال کردی ہے۔

اُنروا کے ملازمین کی لیبر یونین کی اپیل پر غزہ میں سوموار کو ایک روزہ ہڑتال کے دوران میں ڈھائی سو سے زیادہ اسکولوں کے علاوہ طبی اور امدادی تقسیم کے مراکز بھی بند ہیں۔ غزہ شہر میں اُنروا کے ہیڈ کوارٹرز کے باہر اس کے ملازمین نے احتجاجی مظاہرہ کیا ہے۔
لیبر یونین نے برطرف کیے گئے ملازمین کی بحالی کا مطالبہ کیا ہے ۔اس کے لیڈروں کا کہنا ہے کہ وہ اپنے مطالبات کے حق میں ہڑتال کے علاوہ مزید اقدامات بھی کرسکتے ہیں۔یونین کی ڈپٹی چئیرمین امل البطش نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ’’ہڑتال اُنروا کی انتظامیہ کی جانب سے ملازمین کے مطالبات پر کان نہ دھرنے کے ردعمل میں کی جارہی ہے۔اس کو ملازمین کے مسائل کے حل میں کوئی دلچسپی نہیں ہے‘‘۔
اُنروا کے ترجمان کرس گونیس نے مزدور یونین کی اس ہڑتال پر افسوس کا اظہا ر کیا ہے اور کہا ہے کہ ’’ ہمیں ایسے کسی اقدام پر افسوس ہے جس سے مہاجرین کو ایجنسی کی جانب سے مہیا کی جانے والی خدمات پر منفی اثرات مرتب ہو سکتے ہوں۔بالخصوص غزہ ایسی جگہ پر جہاں ایک عشرے سے ناکا بندی جاری ہے اور اس سے مہاجرین نے کافی مصائب جھیلے ہیں‘‘۔
اُنروا کا کہنا ہے کہ ٹرمپ انتظامیہ کی جانب سے مالی امداد میں کٹوتی کے بعد اسامیوں اور خدمات میں تحدید ناگزیر ہوچکی ہے۔ امریکا فلسطینی مہاجرین کو بنیادی شہری سہولیات مہیا کرنے کی ذمے دار اس ایجنسی کو 35 کروڑ ڈالرز سالانہ امداد کی شکل میں دے رہا تھا لیکن صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اس سال کے اوائل سے یہ تمام کی تمام رقم بند کرنے کا فیصلہ کیا تھا اور اس رقم کو اب اسرائیل کی امداد یا دوسرے منصوبوں کے لیے مختص کردیا ہے۔
امریکی صدر کے فیصلے کے بعد اقوام متحدہ کی امدادی ایجنسی مالی مشکلات سے دوچار ہوگئی ہے اور اس نے غزہ اور مغربی کنارے میں ڈھائی سو اسامیاں ختم کرنے اور پانچ سو سے زیادہ کل وقتی ملازمین کو جزوقتی قرار دینے کا اعلان کردیا ہے۔
واضح رہے کہ اُنروا گذشتہ کئی عشروں سے پچاس لاکھ سے زیادہ فلسطینی مہاجرین کو خوراک کی شکل میں امداد مہیا کر رہی ہے اور تیس لاکھ کے لگ بھگ فلسطینیوں کو تعلیم اور صحت سمیت مختلف شہری خدمات مہیا کررہی ہے۔غزہ کی پٹی میں مقیم قریباً 80 فی صد فلسطینی اس ایجنسی کی امداد کے اہل ہیں ۔
اسرائیل کے محاصرہ زدہ اس فلسطینی علاقے میں اُنروا کے ملازمین کی تعداد قریباً تیرہ ہزار ہے۔ان کا کہنا ہے کہ اگر انھیں بے روزگار کرنے کا سلسلہ جاری رہا تو ان کے اہلِ خانہ نانِ جویں کو ترس جائیں گے اور انھیں جان کے لالے پڑ جائیں گے۔غزہ کی پٹی میں اُنروا کے تحت اسکولوں میں دو لاکھ سے زیادہ فلسطینی بچے زیر تعلیم ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
لیبیا کے دارالحکومت طرابلس میں پانچ لاکھ بچے خطرے سے دوچار
چین کے مالیاتی حکام نے فضائی آلودگی کی وجہ سے 158 کمپنیوں کے خلاف کارروائی
Translate News »