مسلم لیگ ق نے کا تحریک انصاف کے رویے پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کو تحفظات سے آگاہ کرنے کا فیصلہ     No IMG     تحریک انصاف نے سابق صدرآصف علی زرداری کی نااہلی کے لیے سپریم کورٹ میں درخواست دائر کردی     No IMG     وزیراعظم عمران خان نے سانحہ ساہیوال پر بغیر تحقیقات کے بیانات دینے پر وزرا اور پنجاب پولیس پر سخت اظہار برہمی     No IMG     وفاقی وزیر اطلاعات فواد چودھری کی جسٹس ثاقب نثارپرتنقید، موجود چیف جسٹس کی تعریف     No IMG     برطانیہ میں بھی برف باری سے شدید سردی     No IMG     برطانیہ کے سابق وزیراعظم کے جان میجر نے موجودہ وزیرِاعظم تھریسا مے سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ یورپ سے علیحدگی (بریگزٹ) پر ریڈ لائن سے پیچھے ہٹ جائیں     No IMG     میکسیکو میں پیٹرول کی پائپ لائن میں دھماکے اور آگ لگنے کے حادثے میں ہلاکتوں کی تعداد 73 ہوگئی     No IMG     امریکی سینیٹر لنزے گراہم کی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے ملاقات     No IMG     سی ٹی ڈی کے مطابق ذیشان کا تعلق داعش سے تھا ,صوبائی وزیر قانون راجہ بشارت     No IMG     وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کو معلوم ہی نہیں پھولوں کا گلدستہ کہاں پیش کرنا ہے کہاں نہیں؟     No IMG     لاہورمیں شہریوں نے پولیس کی دھلائی کر ڈالی، بھاگ کر جان بچائی     No IMG     وزارتِ تجارت نےکاروں کی درآمد پر لگائی جانی والی پابندیوں پر نظر ثانی کرتے ہوئے انہیں مزید سخت کردیا     No IMG     خواتین کے مساوی حقوق اور تشدد کے خاتمے کے لیے امریکہ، برطانیہ سمیت مختلف ممالک میں خواتین کی جانب سے ریلیاں نکالی گئیں۔     No IMG     فرانس میں صدر میکروں کی حکومت کے خلاف پیلی جیکٹ والوں کا احتجاج اس ہفتے بھی جاری رہا، کئی مقامات پر پولیس اور مظاہرین میں جھڑپیں     No IMG     وزیراعلیٰ پنجاب نے اعلیٰ سطحی اجلاس طلب کرلیا     No IMG    

عمران خان کے بقول پاکستان میں جمہوریت کو مافیاز کنٹرول کر رہے
تاریخ :   17-01-2018

لاہور(ورلڈ فاسٹ نیوز فار یو) تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے کہا ہے کہ وہ پارلیمنٹ سے استعفٰی دینے کے معاملے پر وہ اپنی پارٹی سے مشاورت کریں گے اور اس تجویز کو قبول کیا جا سکتا ہے۔ یہ تجویز شیخ رشید کی طرف سے پیش کی گئی۔

لاہور کے مال روڈ پر آج بدھ 17 جنوری کو ہونے والے ایک احتجاجی جسلے سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ یہ کیسی پارلیمنٹ ہے جو مجرم کو پارٹی سربراہ کا اہل بناتی ہے۔ عمران خان کے بقول پاکستان میں جمہوریت کو مافیاز کنٹرول کر رہے ہیں: ’’ میں پارلیمنٹ سے استعفوں کی شیخ رشید کی تجویز کے حق میں ہوں۔ میں اس مسئلے پر اپنی پارٹی سے مشاورت کروں گا اور ہو سکتا ہے کہ ہم یہ تجویز قبول کر لیں۔‘‘

لاہور میں پاکستان عوامی تحریک کی اپیل پر ہونے والے متحدہ اپوزیشن کے احتجاجی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے تحریک انصاف کے چیئر مین عمران خان کا کہنا تھا کہ قصور میں بچوں کے ساتھ فحش فلموں کا اسکینڈل سامنے آیا، 11 بچیوں کے ساتھ زیادتی ہوئی، زینب کا سانحہ ہوا لیکن ملزمان کا پتہ نہیں چل سکا۔  ان کے بقول ماڈل ٹاؤن کا سانحہ طاہرالقادری کو سبق سکھانے کے لیے کیا گیا اور اس سانحے کے پیچھے شریف برادران ہیں۔ عمران خان نے مزید کہا کہ وہ ڈاکٹر طاہر القادری کے ساتھ کھڑے ہیں کیونکہ اگر ایک جلسہ کر کے وہ گھر چلے گئے تو اس سے سانحہ ماڈل ٹاؤن کے مظلوموں کو انصاف نہیں مل سکے گا۔

آصف علی زرداری نے اس جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وہ جب چاہیں شریف فیملی کو اقتدار سے باہرنکال سکتے ہیں۔

پاکستان کے سابق صدر اور پاکستان پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری نے اس جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وہ جب چاہیں شریف فیملی کو اقتدار سے باہرنکال سکتے ہیں: ’’اور مجھے انہیں نکالنے میں کوئی دیر نہیں لگے گی لیکن میں پاکستان کے مستقبل کا سوچتا ہوں۔ ہماری آنے والی نسلوں نے اس ملک میں رہنا ہے۔ یہ جہاں جائیں گے وہاں جاتی امرا بنالیں گے ۔ انہیں کسی کی پرواہ نہیں۔ انہیں صرف جاتی امرا کی پرواہ ہے۔‘‘

لاہور میں متحدہ اپوزیشن کے احتجاجی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے آصف زرداری کا یہ بھی کہنا تھا کہ نواز شریف کا شیخ مجیب کی سوچ کو اپنانا ملک کے مفاد کے منافی ہے، ’’اس ملک کو خطرہ اور کسی سے نہیں صرف جاتی امرا سے ہے۔‘‘ یاد رہے کہ جاتی امرا پاکستان کے سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف کی لاہور کے نواح میں واقع رہائش گاہ کا نام ہے۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے شیخ رشید احمد نے کہا کہ بھارتی آرمی چیف کا پاکستان مخالف بیان اور ٹرمپ کی ٹویٹ کی ٹائمنگ بہت معنی خیز ہے۔ انہوں نے الزام لگایا کہ اجمل قصاب کے گھر کا ایڈریس میاں نواز شریف نے روئٹرز کو دیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ شریف فیملی تقریروں سے اقتدار سے الگ نہیں ہوگی۔ انہوں نے عمران خان کو استعفے دینے، لاٹھی اٹھانے اور جاتی عمرہ کی طرف مارچ کرنے کا مشورہ دیا اور پاکستان کی قومی اسمبلی سے مستعفی ہونے کا اعلان کیا۔

اس سے پہلے پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ علامہ طاہر القادری نے اپنی تقریر میں کہا کہ ملک کی سیاسی قیادت کا اکھٹا ہونا سانحہ ماڈل ٹاؤن کے شہداء کی قربانیوں کی وجہ سے ہے۔

جلسے سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا ، ’’آج ہم سب سانحہ ماڈل ٹاؤن کے متاثرین کو انصاف دلانے جمع ہوئے ہیں۔‘‘ ان کا کہنا تھا کہ ہر مظلوم کو انصاف دلانے کے لیے سب کواکٹھے ہو جانا چاہیے، ’’قوم اٹھے اور پہچانے کہ دشمن کون ہے۔۔۔ نواز شریف اور شہباز شریف جان لیں کہ اگر ہم نے امن یا قانون کو توڑنا ہوتا تو آپ کو جاتی امرا سے باہر ایک قدم رکھنے کی جرأت نہ ہوتی۔‘‘

پولیس نے جاتی امرا کو تحفظ دیا۔ قوم کی بچیوں کو تحفظ کیوں نہیں دیا؟ فیصلہ کرنا ہےکہ کیا ایسے لوگوں کو گوارا کیا جائے گا؟، طاہر القادری

انہوں نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں قانون عوام اور نوازشریف کے بچوں سب کے لیے برابر ہو۔ عوامی تحریک کے سربراہ نے مزید کہا کہ پولیس ان کے خاندان کو تحفظ دینے میں لگی ہے اور سارا پنجاب غیرمحفوظ کر دیا گیا ہے: ’’پولیس نے جاتی امرا کو تحفظ دیا۔ قوم کی بچیوں کو تحفظ کیوں نہیں دیا؟ فیصلہ کرنا ہےکہ کیا ایسے لوگوں کو گوارا کیا جائے گا؟ جمہوریت کی حقیقی روح کو بحال کرنا چاہتے ہیں۔ ہم ظلم کے خلاف آواز بلند کر کے کھڑے نہ ہوئے تو تاریخ ہمیں معاف نہیں کرے گی۔‘‘

Print Friendly, PDF & Email
چودہ برس کے طویل انتظار کے بعد بین لاقوامی ہاکی کی پاکستان میں واپسی
امریکہ نے فلسطین کی کروڑوں ڈالر کی امداد روک دی

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Translate News »