گاڑیوں کی درآمد پر ٹیکس اب غیر ملکی کرنسی میں ادا کرنا ہوگا, وزیر خزانہ     No IMG     تائيوان, کے معاملے ميں مداخلت برداشت نہيں کی جائے گی, چين     No IMG     امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ترکی کی معیشت کو تباہ کرنے کے بیان سے یوٹرن لیتے ہوئے کہا ہے کہ دونوں ممالک کے درمیان معاشی ترقی کے وسیع مواقع ہی     No IMG     وزیراعظم سے سابق امریکی سفیر کیمرون منٹر کی ملاقات     No IMG     آپ لوگ کام نہیں کر سکتے چیف جسٹس نے اسد عمرکو دو ٹوک الفاظ میں کیا کہہ ڈالا     No IMG     شادی والے گھر میں آگ لگنے سے دلہن سمیت 4 خواتین جاں بحق     No IMG     قومی ترقی میں بھرپور کردار ادا کریں گے،آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ     No IMG     اپوزیشن ,جماعتوں نے منی بجٹ مسترد کردیا     No IMG     وزیراعظم عمران خان کو سونے کی کلاشنکوف کا تحفہ مل گیا     No IMG     سعودی لڑکی رھف کا فرار ہونے کے بعد پہلا انٹرویو     No IMG     بنگلہ دیش,گارمنٹس ملازمین کا تنخواہوں میں اضافہ نہ ہونے پر مظاہرہ     No IMG     بھارتی فوج مغربی سرحد کیساتھ دہشتگردانہ کارروائیوں کیخلاف سخت ایکشن لینے سے نہیں ہچکچائے گی۔     No IMG     حکومت نے ایک ہفتے میں ہم سے 113 ارب روپے قرض لیاہے، پاکستانی اسٹیٹ بینک     No IMG     وزیراعظم کی اپوزیشن پر شدید تنقید     No IMG     چین کی عدالت نے منشیات کی اسمگلنگ کے الزام میں کینیڈا کے شہری کی 15 سال قید کی سزا کو پھانسی میں تبدیل کردیا     No IMG    

علیمہ خان کو 29.4 ملین روپے جمع کروانے کا حکم
تاریخ :   13-12-2018

اسلام آباد( ورلڈ فاسٹ نیوزفاریو ) سپریم کورٹ میں بیرون ملک اکاؤنٹس اور جائیدادوں سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔۔چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے ازخود نوٹس کیس کی سماعت کی۔دوران سماعت چیف جسٹس نے اسفتسار کیا کہ علیمہ خان کدھر ہیں؟ کیا وہ عدالت میں موجود

ہیں؟۔جس کے بعد علیمہ خان روسٹروم پر آ گئیں۔
چیف جسٹس نے علیمہ خان سے اسسفسار کیا کہ دوبئی میں کتنے کی جائیدادیں خریدیں؟ علیمہ خان نے جواب دیا کہ دوبئی میں 3لاکھ75ہزار ڈالر کی جائیدادیں خریدیں۔ علیمہ خان کا عدالت میں کہنا تھا کہ 50 فیصد اپنی رقم اور 50فیصد بینک سے قرضہ لے کر جائیداد خریدی،2008ء میں خریدی گئی جائیدادوں کو گذشتہ سال فروخت کر دیا۔پاکستانی پونے تین کروڑ روپے کی جائیدادیں خریدیں تھیں۔
دوران سماعت وکیل سلمان اکرم راجہ نے عدالت کو بتایا کہ علیمہ خان نے دوبئی میں 2008ء میں جائیداد خریدی۔جائیدادوں کے رقم بینکنگ چینل کے ذریعے سے دوبئی بھیجی۔ایب بی آر حکام نے عدالت کو بتایا کہ علیمہ خان نے دوبئی میں جائیداد خریدی۔جائیداد کی 50فیصد رقم علیمہ خان نے دی، سپریم کورٹ نے علیمہ خان کو 29.4ملین روپے جمع کروانے کا حکم دے دیا ہے۔
عدالت نے حکم دیا کہ علیمہ خان 29.4ملین روپے ایف بی آر میں جمع کروائیں۔عدالت نے یہ بھی کہا کہ مذکورہ رقم جمع نہ کروانے پر جائیداد ضبط کر لی جائے گی۔ عدالت نے کہا کہ علیمہ خان چاہیں تو ایف بی آر کے خلاف قانونی کاروائی کر سکتی ہیں تاہم اس سے قبل ان کو مذکورہ رقم ایف بی آر میں جمع کروانی ہو گی۔خیال رہے سپریم کورٹ نے پاکستانیوں کے بیرون ملک جائیدادوں کے حوالے سے کیس میں وزیر اعظم کی ہمشیرہ علیمہ خانم کے ٹیکس ریکارڈ کی فائل لاہور رجسٹری میں طلب کر تے ہوئے واضح کیا تھا کہ اگرعلیمہ خانم کی عرب امارات میں کوئی جائیدا د ہے تواس کے بارے میں عدالت کوتفصیلات فراہم کی جائیں۔
اس موقع پرچیف جسٹس نے ایف بی آر کے ممبرٹیکس سے کہا کہ عدالت کو بتایا جائے کہ کیا علیمہ خانم کی یو اے ای میں کوئی جائیداد ہے اور کیا انہوں نے ایمنسٹی کے لئے درخواست دی ہے اوراگر درخواست دی ہے تو اس کی تفصیلات عدالت کوبتائی جائیں جس پر ممبر ٹیکس نے بتایا کہ علیمہ خانم نے ٹیکس ایمنسٹی سکیم سے فائدہ اٹھایا ہے تاہم ایمنسٹی اسکیم کی ایک رازداری ہے جس کو ظاہر نہیں کیا جا سکتا ہم ٹیکس ریکارڈ کی معلومات نہیں دے سکتے۔
جس پرجسٹس اعجاز الاحسن نے کہا کہ کسی بھی شہری کو ایمنسٹی اسکیم سے پہلے اثاثے کو ڈکلیئر کرنا پڑتا ہے کیا علیمہ خانم نے پہلے کوئی اثاثہ ظاہرکیا ہے ۔ چیف جسٹس کاکہناتھا ایمنسٹی اسکیم میں کس چیز کی رازداری ہوتی ہے، ہمیں سربمہر لفافے میں معلومات دی جائیں، عدالت میں علیمہ خانم کا ٹیکس ریکارڈ لے کر آئیں۔ سماعت کے دوران چیف جسٹس نے ایف آئی اے اور ایف بی آر حکام سے کہا کہ عدالت کو بیرون ملک پاکستانیوں کی جائیدادوں سے متعلق نتائج چاہییں،ہم نے 20 بندوں سے متعلق تحقیقات کا کہا تھا لیکن آپ نے سارے پاکستان کو نوٹس جاری کئے ہیں،وقفے کے بعد عدالت کو علیمہ خانم کی ٹیکس فائل سے متعلق بتایاگیا کہ مطلوبہ فائل لاہور سے منگوائی جا رہی ہیں جس پر چیف جسٹس نے کہا کہ فائل اگر لاہور میں ہے تو نہ منگوائی جائے بلکہ آج ہفتہ کو لاہوررجسٹری میں فائل پیش کی جائے ، ڈی جی نے ایف آئی اے بیرون ملک جائیدادوں کے بارے میں عدالت کو رپورٹ پیش کی اور کہا کہ عرب ا مارات میںکل 1115 پاکستانیوں کی جائیدادیں موجود ہیں، ہماری تحقیقات کے نتیجے میں ان لوگوں کی فہرست میں دو سو بیس لوگوں کا مزید اضافہ ہوا ہے، جن کی فہرست ہم نے ایف بی آر کو بھی فراہم کر دی ہے جبکہ متعلقہ لوگوں کو نوٹس جاری کرنے کے ساتھ ساتھ کچھ لوگوں سے سفری تفصیلات بھی طلب کی تھیں۔

Print Friendly, PDF & Email
امریکہ کا ایک جنگی طیارہ بحر پیسیفک میں گر کر تباہ
سابق وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق ریلوے خسارہ کیس کی سماعت کے لیے سپریم کورٹ میں پیش
Translate News »