مسلم لیگ ق نے کا تحریک انصاف کے رویے پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کو تحفظات سے آگاہ کرنے کا فیصلہ     No IMG     تحریک انصاف نے سابق صدرآصف علی زرداری کی نااہلی کے لیے سپریم کورٹ میں درخواست دائر کردی     No IMG     وزیراعظم عمران خان نے سانحہ ساہیوال پر بغیر تحقیقات کے بیانات دینے پر وزرا اور پنجاب پولیس پر سخت اظہار برہمی     No IMG     وفاقی وزیر اطلاعات فواد چودھری کی جسٹس ثاقب نثارپرتنقید، موجود چیف جسٹس کی تعریف     No IMG     برطانیہ میں بھی برف باری سے شدید سردی     No IMG     برطانیہ کے سابق وزیراعظم کے جان میجر نے موجودہ وزیرِاعظم تھریسا مے سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ یورپ سے علیحدگی (بریگزٹ) پر ریڈ لائن سے پیچھے ہٹ جائیں     No IMG     میکسیکو میں پیٹرول کی پائپ لائن میں دھماکے اور آگ لگنے کے حادثے میں ہلاکتوں کی تعداد 73 ہوگئی     No IMG     امریکی سینیٹر لنزے گراہم کی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے ملاقات     No IMG     سی ٹی ڈی کے مطابق ذیشان کا تعلق داعش سے تھا ,صوبائی وزیر قانون راجہ بشارت     No IMG     وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کو معلوم ہی نہیں پھولوں کا گلدستہ کہاں پیش کرنا ہے کہاں نہیں؟     No IMG     لاہورمیں شہریوں نے پولیس کی دھلائی کر ڈالی، بھاگ کر جان بچائی     No IMG     وزارتِ تجارت نےکاروں کی درآمد پر لگائی جانی والی پابندیوں پر نظر ثانی کرتے ہوئے انہیں مزید سخت کردیا     No IMG     خواتین کے مساوی حقوق اور تشدد کے خاتمے کے لیے امریکہ، برطانیہ سمیت مختلف ممالک میں خواتین کی جانب سے ریلیاں نکالی گئیں۔     No IMG     فرانس میں صدر میکروں کی حکومت کے خلاف پیلی جیکٹ والوں کا احتجاج اس ہفتے بھی جاری رہا، کئی مقامات پر پولیس اور مظاہرین میں جھڑپیں     No IMG     وزیراعلیٰ پنجاب نے اعلیٰ سطحی اجلاس طلب کرلیا     No IMG    

سندھ ہائی کورٹ نے ڈاکٹر عاصم حسین کو 90 دن رینجرز کی حراست میں رکھنے کے خلاف درخواست
تاریخ :   10-11-2017

کراچی (ورلڈ فاسٹ نیوز فار یو) سندھ ہائی کورٹ نے ڈاکٹر عاصم حسین کو 90 دن رینجرز کی حراست میں رکھنے کے خلاف درخواست پر متعلقہ دستاویزات 24 نومبر تک پیش کرنے کا حکم دے دیا۔جمعہ کو چیف جسٹس کی سربراہی میں دو رکنی بینچ کے روبرو رینجرز کی جانب سے ڈاکٹر عاصم حسین کی گرفتاری کے خلاف درخواست کی سماعت ہوئی۔ ڈاکٹر عاصم کے وکیل انور منصور خان نے کہا کہ ڈاکٹر عاصم کو رینجرز نے 90 روز کیلئیحراست میں لیا، 93 دن رکھا۔ڈاکٹر عاصم کو نامعلوم جگہ پر رکھا گیا، فیملی اور وکلا سے ملاقات نہیں کرائی گئی۔ انور منصور نے کہا کہ ڈاکٹر عاصم پر بدترین ٹارچر کیا گیا اور مرضی کے بیانات لیے گئے۔ چیف جسٹس نے استفسار کیا کیا رینجرز نے ڈاکٹر عاصم کا اقبالی بیان ریکارڈ کیا یا جے آئی ٹی نے بیان لیا۔ جس پر انور منصور نے کہا کہ ڈاکٹرعاصم کا بیان دیگر اداروں نے مل کرلیا اور تمام بیانات پبلک بھی کیے گئے۔چیف جسٹس نے استفسارکیا کہ آپ کا کہنا ہے بیان پبلک کرکے ڈاکٹر عاصم کی تذلیل کی گئی ہی انور منصور بولے کہ جی رینجرز نے ڈاکٹر عاصم کا بیان دلوا کر ان کی تذلیل کی۔ جسٹس کے کے آغا نے ریماکس میں کہا کہ رینجرز کو دیے گئے اختیار میں تو یہ موجود ہے کہ وہ کسی کو بھی گرفتار کرسکتے ہیں۔ انور منصور نے کہا کہ اس قانون میں یہ بھی ہے کہ آرٹیکل 10 تحت ان کے حقوق کا بھی خیال رکھا گیا ہے۔رینجرز کو ٹارگٹ کلرز، بھتہ خوری اور دہشت گردوں کو پکڑنے کے لیے اختیار دیا گیا تھا۔ دہشت گردوں کو بھی ٹھوس شواہد اور اطلاع پر گرفتار کرنے کا حکم دیا تھا۔ ڈاکٹر عاصم حسین کسی بھی سنگین واردات میں مطلوب نہیں تھے۔ڈاکٹر عاصم بے دہشت گردوں کو فنڈنگ نہیں کی تھی۔ ڈاکٹر عاصم کے خلاف دہشت گردوں کی معاونت نہیں بلکہ علاج کرنے کا مقدمہ درج کیا گیا۔ عدالت نے ڈاکٹر عاصم کیس سے متعلق تمام دستاویزات طلب کرتے ہوئے سماعت 24 نومبر تک ملتوی کردی۔

Print Friendly, PDF & Email
قومی احتساب بیوروکا برطانوی حکومت کو شریف خاندان کی کمپنیوں اور جائیداد کا ریکارڈ فراہم کرنے کیلئے خط
ایم ایم اے کی بحالی کا فیصلہ قابل تحسین ،اس سے دینی جماعتوں کے ووٹ بنک میں اضافہ ہو گا

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Translate News »