مسلم لیگ ق نے کا تحریک انصاف کے رویے پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کو تحفظات سے آگاہ کرنے کا فیصلہ     No IMG     تحریک انصاف نے سابق صدرآصف علی زرداری کی نااہلی کے لیے سپریم کورٹ میں درخواست دائر کردی     No IMG     وزیراعظم عمران خان نے سانحہ ساہیوال پر بغیر تحقیقات کے بیانات دینے پر وزرا اور پنجاب پولیس پر سخت اظہار برہمی     No IMG     وفاقی وزیر اطلاعات فواد چودھری کی جسٹس ثاقب نثارپرتنقید، موجود چیف جسٹس کی تعریف     No IMG     برطانیہ میں بھی برف باری سے شدید سردی     No IMG     برطانیہ کے سابق وزیراعظم کے جان میجر نے موجودہ وزیرِاعظم تھریسا مے سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ یورپ سے علیحدگی (بریگزٹ) پر ریڈ لائن سے پیچھے ہٹ جائیں     No IMG     میکسیکو میں پیٹرول کی پائپ لائن میں دھماکے اور آگ لگنے کے حادثے میں ہلاکتوں کی تعداد 73 ہوگئی     No IMG     امریکی سینیٹر لنزے گراہم کی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے ملاقات     No IMG     سی ٹی ڈی کے مطابق ذیشان کا تعلق داعش سے تھا ,صوبائی وزیر قانون راجہ بشارت     No IMG     وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کو معلوم ہی نہیں پھولوں کا گلدستہ کہاں پیش کرنا ہے کہاں نہیں؟     No IMG     لاہورمیں شہریوں نے پولیس کی دھلائی کر ڈالی، بھاگ کر جان بچائی     No IMG     وزارتِ تجارت نےکاروں کی درآمد پر لگائی جانی والی پابندیوں پر نظر ثانی کرتے ہوئے انہیں مزید سخت کردیا     No IMG     خواتین کے مساوی حقوق اور تشدد کے خاتمے کے لیے امریکہ، برطانیہ سمیت مختلف ممالک میں خواتین کی جانب سے ریلیاں نکالی گئیں۔     No IMG     فرانس میں صدر میکروں کی حکومت کے خلاف پیلی جیکٹ والوں کا احتجاج اس ہفتے بھی جاری رہا، کئی مقامات پر پولیس اور مظاہرین میں جھڑپیں     No IMG     وزیراعلیٰ پنجاب نے اعلیٰ سطحی اجلاس طلب کرلیا     No IMG    

سعودی حکومت کے اقدامات پر تنقید کرنے والے شہزادہ ملازمت سے برطرف
تاریخ :   10-01-2018

سعودی عرب(ورلڈ فاسٹ نیوز فار یو) اپنے ایک آڈیو پیغام میں سعودی حکومت کے اقدامات پر تنقید کرنے والے سعودی شہزادے کو اُن کے عہدے سے برطرف کر دیا گیا ہے۔ عبداللہ بن سعود نے سعودی شہزادوں کو گرفتار کرنے کے حکومتی فیصلے کو غیر منطقی قرار دیا تھا۔

گزشتہ برس نومبر میں سعودی حکومت نے بدعنوانی کے خلاف ایک بڑی مہم شروع کرتے ہوئے شہزادوں سمیت درجنوں اہم شخصیات کو گرفتار کر لیا تھا

خبر رساں ادارے اے پی کے مطابق سعودی شہزادہ عبداللہ بن سعود بن محمد ملکی میری ٹائم اسپورٹس فیڈریشن کے سربراہ تھے۔ سعودی حکومت نے اب انہیں اس عہدے سے الگ کر کے ایک ملٹری افسر کو اُن کی جگہ تعینات کر دیا ہے۔

 انہوں نے چھ منٹ طویل ایک آڈیو پیغام میں سعودی حکومت پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا تھا کہ حکومت نے گزشتہ ہفتے گرفتار ہوئے گیارہ سعودی شہزادوں کی گرفتاری کی جو وجوہات بیان کی ہیں وہ جھوٹ پر مبنی اور غیر منطقی ہیں۔ یہ آڈیو پیغام رواں ہفتے عربی میڈیا کی ویب سائٹوں پر جاری کیا گیا۔ نیوز ایجنسی اے پی کا تاہم کہنا ہے کہ وہ آزادانہ طور پر اس آڈیو ریکارڈنگ کی صحت کی تصدیق نہیں کرا سکی۔

نیوز ایجنسی بلوم برگ کا، جس  نے اس آڈیو کو پہلی بار رپورٹ کیا تھا،  کہنا ہے کہ سب سے پہلے یہ آڈیو پیغام اسمارٹ فون ایپلیکیشن واٹس ایپ پر پوسٹ کیا گیا۔ آڈیو پیغام میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ گرفتار ہونے والے گیارہ شہزادوں میں ارب پتی  شہزادے اور سعودی عرب میں ڈیری مصنوعات بنانے والی سب سے بڑی کمپنی ’المراعی‘ کے چیئرمین کے صاحبزادے بھی شامل ہیں۔

عام طور پر سعودی شاہی خاندان کے افراد حکومت کے خلاف کوئی بیان نہیں دیتے۔ اس آڈیو پیغام کے منظر عام پر آنے سے خاندانِ سعود میں باہمی اختلافات اور تناؤ کی صورت حال کا پتہ چلتا ہے۔

اس آڈیو ریکارڈنگ میں شہزادہ عبداللہ بن سعود بن محمد نے مبینہ طور پر اپنا نام بتاتے ہوئے کہا ہے کہ گرفتار شدہ شہزادوں میں سے کسی ایک نے بھی شاہ سلمان کی نافرمانی نہیں کی۔

سعودی میڈیا نے ہفتے کے روز ایسی خبریں شائع کی تھیں کہ گیارہ شہزادے تاریخی اہمیت کے حامل ’ قصر الحُکم‘ میں جمع ہو کر اپنے ایک رشتہ دار کو دی گئی سزائے موت کا معاوضہ طلب کر رہے تھے۔ علاوہ ازیں ان شہزادوں نے اُس حالیہ شاہی فرمان کی بھی مذمت کی جس کی رُو سے شاہی افراد کو پانی اور بجلی کے بلوں کی ادائیگی کی مد میں دی جانے والی رقوم میں کٹوتی کی گئی ہے۔

پرنس عبداللہ نے اپنی ریکارڈنگ میں کہا ہے کہ یہ شہزادے اپنے ایک رشتہ دار کے ہمراہ تھے جسے اُس کی سابقہ ملازمت کے بارے میں سوال جواب کے لیے بلایا گیا تھا۔ لیکن وہاں موجود سکیورٹی گارڈوں نے بد تمیزی کا مظاہرہ کیا جو کسی بھی سعودی شہری کے لیے قابل قبول نہیں ہے۔

یاد رہے کہ اتوار کے روز سعودی اٹارنی جنرل نے کہا تھا کہ گرفتار شدہ شہزادوں کو اُن کے مطالبات کے حوالے سے اُن کی غلطی سے آگاہ کر دیا گیا تھا لیکن انہوں نے قصر الحکم چھوڑنے سے انکار کر دیا۔

خیال رہے کہ گزشتہ برس نومبر میں سعودی حکومت نے بدعنوانی کے خلاف ایک بڑی مہم شروع کرتے ہوئے شہزادوں سمیت درجنوں اہم شخصیات کو گرفتار کر لیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email
وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے قصور کے علاقے میں 8 سالہ بچی کے قتل کے واقعہ کا سخت نوٹس لیتے ہوئے ملزمان کی فوری گرفتاری کا حکم دیا ہ
قصور:آرمی چیف کےفوری کاروائی کیلئےاحکامات جاری،مجرموں کوجلد گرفتارکرکےعبرتناک سزادی جائے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Translate News »