مسلم لیگ ق نے کا تحریک انصاف کے رویے پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کو تحفظات سے آگاہ کرنے کا فیصلہ     No IMG     تحریک انصاف نے سابق صدرآصف علی زرداری کی نااہلی کے لیے سپریم کورٹ میں درخواست دائر کردی     No IMG     وزیراعظم عمران خان نے سانحہ ساہیوال پر بغیر تحقیقات کے بیانات دینے پر وزرا اور پنجاب پولیس پر سخت اظہار برہمی     No IMG     وفاقی وزیر اطلاعات فواد چودھری کی جسٹس ثاقب نثارپرتنقید، موجود چیف جسٹس کی تعریف     No IMG     برطانیہ میں بھی برف باری سے شدید سردی     No IMG     برطانیہ کے سابق وزیراعظم کے جان میجر نے موجودہ وزیرِاعظم تھریسا مے سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ یورپ سے علیحدگی (بریگزٹ) پر ریڈ لائن سے پیچھے ہٹ جائیں     No IMG     میکسیکو میں پیٹرول کی پائپ لائن میں دھماکے اور آگ لگنے کے حادثے میں ہلاکتوں کی تعداد 73 ہوگئی     No IMG     امریکی سینیٹر لنزے گراہم کی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے ملاقات     No IMG     سی ٹی ڈی کے مطابق ذیشان کا تعلق داعش سے تھا ,صوبائی وزیر قانون راجہ بشارت     No IMG     وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کو معلوم ہی نہیں پھولوں کا گلدستہ کہاں پیش کرنا ہے کہاں نہیں؟     No IMG     لاہورمیں شہریوں نے پولیس کی دھلائی کر ڈالی، بھاگ کر جان بچائی     No IMG     وزارتِ تجارت نےکاروں کی درآمد پر لگائی جانی والی پابندیوں پر نظر ثانی کرتے ہوئے انہیں مزید سخت کردیا     No IMG     خواتین کے مساوی حقوق اور تشدد کے خاتمے کے لیے امریکہ، برطانیہ سمیت مختلف ممالک میں خواتین کی جانب سے ریلیاں نکالی گئیں۔     No IMG     فرانس میں صدر میکروں کی حکومت کے خلاف پیلی جیکٹ والوں کا احتجاج اس ہفتے بھی جاری رہا، کئی مقامات پر پولیس اور مظاہرین میں جھڑپیں     No IMG     وزیراعلیٰ پنجاب نے اعلیٰ سطحی اجلاس طلب کرلیا     No IMG    

روس نے آئیندہ ماہ سوویت یونین کے خاتمے کے بعد سے اب تک کی سب سے بڑی فوجی مشقیں منعقد کرنے کا اعلان
تاریخ :   28-08-2018

ماسکو( ورلڈ فاسٹ نیوزفاریو ) روس نے آئیندہ ماہ سوویت یونین کے خاتمے کے بعد سے اب تک کی سب سے بڑی فوجی مشقیں منعقد کرنے کا اعلان کیا ہے۔روس کے وزیر دفاع سرگی شوئیگو نے آج منگل کے روز ان مشقوں کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ ان میں چین اور منگولیا کی فوجیں بھی حصہ لیں گی۔

واسٹوک 2018 سے موسوم یہ مشقیں روسی افواج کے مرکزی اور مشرقی علاقوں میں منعقد ہوں گی جن میں تین لاکھ فوجی، ایک ہزار جہاز، دو روسی بحری بیڑے اور اُن سے ملحقہ تمام ہوائی یونٹ شریک ہوں گے۔یہ بڑے پیمانے کی فوجی مشقیں ایسے وقت منعقد ہو رہی ہیں جب مغربی ممالک اور روس کے درمیان شدید کشیدگی پائی جاتی ہے اور روس اپنی مغربی سرحد سے متصل علاقوں میں نیٹو فوجوں کے اجتماع پر تنقید کرتا رہا ہے۔نیٹو کا کہنا ہے کہ اُس نے یہ فوجی اجتماع 2014 میں یوکرین کے شہر کرائمیا پر قبضہ کرنے کے اقدام کے بعد ممکنہ روسی جارحیت کی روک تھام کی خاطر کیا ہے۔11 سے 15 ستمبر تک منعقد ہونے والی مجوزہ روسی فوجی مشقوں سے ممکنہ طور پر جاپان کی پریشانی میں بھی اضافہ ہو سکتا ہے۔ جاپان پہلے ہی مشرق بعید میں روسی فوجوں کے اجتماع پر پریشانی کا اظہار کر چکا ہے۔ روس نے رد عمل میں کہا تھا کہ اُس کا یہ اقدام جاپان کی طرف سے امریکی ساخت کے ایجز میزائل نظام کی تنصیب کے جواب میں کیا گیا ہے۔روسی فوجی مشقوں کے دوران ہی جاپانی وزیر اعظم شنزو آبے روسی شہر ولادی واسٹک میں ایک فورم میں شرکت کریں گے۔اُدھر جاپانی وزارت خارجہ کے ایک اہلکار کا کہنا ہے کہ جاپان روس اور چین کے درمیان فوجی تعاون کی بدلتی ہوئی صورت حال پر گہری نظر رکھے ہوئے ہے۔روسی وزیر دفاع شائیگو نے روسی شہر خاکیشیا کے دورے کے دوران میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ آئیندہ ماہ ہونے والی فوجی مشقیں 1981 میں سوویت فوجی مشقوں زاپیڈ۔81 کے بعد سے سب سے بڑی فوجی مشقیں ہوں گی۔

Print Friendly, PDF & Email
سعودی عرب,خواتین جہاز اڑنے کی تربیت حاصل کریں گی
سابق وزیر داخلہ چوہدری نثار کا بیرون ملک قیام کرنے کا فیصلہ
Translate News »