مسلم لیگ ق نے کا تحریک انصاف کے رویے پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کو تحفظات سے آگاہ کرنے کا فیصلہ     No IMG     تحریک انصاف نے سابق صدرآصف علی زرداری کی نااہلی کے لیے سپریم کورٹ میں درخواست دائر کردی     No IMG     وزیراعظم عمران خان نے سانحہ ساہیوال پر بغیر تحقیقات کے بیانات دینے پر وزرا اور پنجاب پولیس پر سخت اظہار برہمی     No IMG     وفاقی وزیر اطلاعات فواد چودھری کی جسٹس ثاقب نثارپرتنقید، موجود چیف جسٹس کی تعریف     No IMG     برطانیہ میں بھی برف باری سے شدید سردی     No IMG     برطانیہ کے سابق وزیراعظم کے جان میجر نے موجودہ وزیرِاعظم تھریسا مے سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ یورپ سے علیحدگی (بریگزٹ) پر ریڈ لائن سے پیچھے ہٹ جائیں     No IMG     میکسیکو میں پیٹرول کی پائپ لائن میں دھماکے اور آگ لگنے کے حادثے میں ہلاکتوں کی تعداد 73 ہوگئی     No IMG     امریکی سینیٹر لنزے گراہم کی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے ملاقات     No IMG     سی ٹی ڈی کے مطابق ذیشان کا تعلق داعش سے تھا ,صوبائی وزیر قانون راجہ بشارت     No IMG     وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کو معلوم ہی نہیں پھولوں کا گلدستہ کہاں پیش کرنا ہے کہاں نہیں؟     No IMG     لاہورمیں شہریوں نے پولیس کی دھلائی کر ڈالی، بھاگ کر جان بچائی     No IMG     وزارتِ تجارت نےکاروں کی درآمد پر لگائی جانی والی پابندیوں پر نظر ثانی کرتے ہوئے انہیں مزید سخت کردیا     No IMG     خواتین کے مساوی حقوق اور تشدد کے خاتمے کے لیے امریکہ، برطانیہ سمیت مختلف ممالک میں خواتین کی جانب سے ریلیاں نکالی گئیں۔     No IMG     فرانس میں صدر میکروں کی حکومت کے خلاف پیلی جیکٹ والوں کا احتجاج اس ہفتے بھی جاری رہا، کئی مقامات پر پولیس اور مظاہرین میں جھڑپیں     No IMG     وزیراعلیٰ پنجاب نے اعلیٰ سطحی اجلاس طلب کرلیا     No IMG    

بینکوں سے ماہانہ دس لاکھ روپے نکلوانے والوں کی تفصیلات کی فراہمی لازمی قرار دے دی گئی
تاریخ :   14-09-2018

اسلام آباد( ورلڈ فاسٹ نیوزفاریو ) بینکوں سے ماہانہ دس لاکھ روپے نکلوانے والوں کی تفصیلات کی فراہمی لازمی قرار دے دی گئی ہے۔ تفصیلات کے مطابق ایف بی آر نے بینکوں کے لیے کریڈٹ کارڈ و ڈیبٹ کارڈز کے ذریعے دو لاکھ روپے ماہانہ کی ادائیگیاں کرنے والے، دس لاکھ روپے ماہانہ سے زائد رقم

نکلوانے والے اور ماہانہ ایک کروڑ روپے یا اس سے زائد رقم جمع کروانے والے اکاؤنٹس ہولڈرز کی تفصیلات کی فراہمی کو لازمی قرار دے دیا گیا ہے جبکہ ٹیکس چوری میں ملوث امیر لوگوں کا سُراغ لگانے کے لیے ایف بی آر کو نادرا سے ڈیٹا تک رسائی دے دی گئی ہے ، اس ضمن میں ایف بی آر کی جانب سے گذشتہ روز انکم ٹیکس سرکلر نمبر تین جاری کیا گیا جس میں فنانس ایکٹ کے ذریعے انکم ٹیکس آرڈیننس 2001ء میں کی جانے والی اہم ترامیم کے بارے میں وضاحت کی گئی۔
ایف بی آر کی جانب سے یہ وضاحتی سرکلر بجٹ کے ساڑھے تین ماہ کے بعد جاری کیا گیا ہے اور وضاحتی سرکلر کا اجرا ایسے موقع پر کیا گیا ہے جب حکومت نظر ثانی شدہ بجٹ پیش کرنے جا رہی ہے جس کے لیے فیڈرل بورڈ آف ریونیو نے فنانس ترمیمی بل 2018ء کا مسودہ تیار کر کے وزارت خزانہ کو بھجوادیا ہے جس کی وفاقی کابینہ سے منظوری کے بعد پارلیمنٹ کے آئندہ اجلاس میں پیش کیے جانے کا امکان ہے۔
ایف بی آر حکام کا کہنا ہے کہ وضاحتی سرکلر کے اجرا میں تاخیر کی وجہ سے اسٹیک ہولڈرز میں کنفیوژن پھیلی اور جب وضاحتی سرکلر جاری کیا گیا ہے تو اس کے بعد ترمیم شدہ فنانس بل آجائے گا البتہ ایف بی آر کی جانب سے جاری کردہ وضاحتی سرکلر میں بتایا گیا ہے کہ بینکوں میں 50 ہزار روپے سے زائد یومیہ کی مد میں ماہانہ 10 لاکھ روپے یا اس س سے زائد رقوم نکلوانے والے فائلرز اور نان فائلرز سے ہونے والے ود ہولڈنگ ٹیکس کٹوتی کے ساتھ ساتھ اے ٹی ایم کے ذریعے 50 ہزار یومیہ سے زائد کی مد میں دو لاکھ روپے ماہانہ تک رقوم نکلوانے والے صارفین کی فہرست و کوائف بھی ایف بی آر کو فراہم ہوں گے۔
علاوہ ازیں بینکوں کو ایک ماہ کے دوران ایک کروڑ روپے یا اس سے زائد رقم جمع کروانے والے لوگوں کے نام کی فہرست اور کوائف مہیا کرنا ہوں گے۔ سرکلر میں مزید کہا گیا ہے کہ پری پیڈ کارڈ، ڈیبٹ کارڈ کا کسی پلاسٹک کارڈ کے ذریعے بیرون ملک رقم منتقل کرنے والے فائلرز سے ایک فیصد اور نان فائلرز صارفین نے تین فیصد کٹوتی کی جائے ، سرکلر میں مزید کہا گیا کہ فیڈرل بورڈ آف ریونیو کو نادرا کے ڈیٹا تک بھی رسائی دی گئی ہے ، اس بارے میں ایف بی آر حکام کا کہنا ہے کہ اس اقدام کا بنیادی مقصد ٹیکس چوری کرنے والے امیر لوگوں کا سُراغ لگانا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
ترک وزرائے خارجہ کے درمیان وفود کی سطح پر مذاکرات جاری
پانی کی کمی ملک کو ریگستان بنا سکتی ہے،پاکستان اکانومی واچ کے صدر ڈاکٹر مرتضیٰ مغل
Translate News »