آشیانہ ہاؤسنگ اسکینڈل میں اپوزیشن لیڈر قومی اسمبلی شہباز شریف پر فرد جُرم عائد کر دی گئی     No IMG     محکمہ موسمیات کی پیش گوئی 19سے 26فروری تک ملک بھر میں بارشوں کی نیا سلسلہ شروع ہونے والا ہے     No IMG     وزیراعظم عمران خان کا سعودی عرب میں مقیم پاکستانیوں کیلئے بڑا مطالبہ     No IMG     حکمرانوں کے تمام حلقے کشمیر کے معاملے پر خاموش ہیں, مولانا فضل الرحمان     No IMG     پاکستان, میں 20ارب ڈالرز کی سرمایہ کاری کا پہلا مرحلہ مکمل ہوگیا: سعودی ولی عہد     No IMG     لاہور قلندرز 78 رنز پر ڈھیر     No IMG     ابو ظہبی میں ہتھیاروں کے بین الاقوامی میلے کا آغاز     No IMG     برطانوی ہوائی کمپنی (Flybmi) دیوالیہ، سینکڑوں مسافروں کو پریشانی     No IMG     یورپ میں قانونی طریقے سے داخل ہونے والے افراد کی طرف سے سیاسی پناہ کی درخواستیں دیے جانے کا رجحان بڑھ رہا ہے     No IMG     ٹرین کے ٹائلٹ میں پستول، سینکڑوں مسافر اتار لیے گئے     No IMG     یورپی یونین ,کے پاسپورٹوں کا کاروبار ’ایک خطرناک پیش رفت     No IMG     بھارت نے کشمیری حریت رہنماؤں کو دی گئی سیکیورٹی اورتمام سرکاری سہولتیں واپس لے لی     No IMG     پی ایس ایل کے چھٹے میچ میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے اسلام آباد یونائیٹڈ کو 7وکٹوں سے شکست دےدی     No IMG     وزیرخارجہ کا ایرانی ہم منصب کو ٹیلیفون     No IMG     سعودی ولی عہد کا پاکستان میں تاریخی اور پُرتپاک استقبال     No IMG    

اٹلی میلان میں ٹرین حادثہ، تین ہلاک، سو سے زائد زخمی
تاریخ :   25-01-2018

اٹلی(ورلڈ فاسٹ نیوز فار یو) شہر میلان شہرکے قریب ایک مسافر ٹرین کو پیش آنے والےحادثے کے نتیجے میں تین افراد ہلاک جبکہ 110 کے قریب زخمی ہو گئے ہیں۔ حکام کے مطابق ان زخمیوں میں سے 10 افراد کی حالت تشویشناک ہے۔
جرمن خبر رساں ادارے ڈی پی اے نے یہ بات مقامی حکومت کی خاتون ترجمان کے حوالے سے بتائی ہے۔ چھ بوگیوں پر مشتمل یہ ٹرین مقامی وقت کے مطابق صبح ساڑھے پانچ بجے کریمونا نامی شہر سے روانہ ہوئی جبکہ صبح سات بجے کے قریب یہ ٹرین پیوٹیلو نامی شہر کے قریب پٹری سے اُتر گئی۔ کریمونا شہر میلان سے 90 کلومیٹر جنوب مشرق میں واقع ہے۔صبح ساڑھے پانچ بجے کریمونا نامی شہر سے روانہ ہوئی جبکہ صبح سات بجے کے قریب یہ ٹرین پیوٹیلو نامی شہر کے قریب پٹری سے اُتر گئی

میلان کی نائب پولیس سربراہ کیارا امبروزیو نے میڈیا کو بتایا، ’’یہ ایسا وقت ہے جب زیادہ تر لوگ سفر کرتے ہیں اسی وجہ سے یہ ٹرین بھری ہوئی تھی۔‘‘
مقامی میڈیا کے مطابق امدادی اداروں کو حادثے کا شکار ہونے والی اس گاڑی سے ہلاک شدگان اور زخمیوں کو نکالنے میں قریب تین گھنٹے لگے۔ ٹیلی وژن پر دکھائی جانے والے مناظر میں زخمیوں کو بذریعہ ہیلی کاپٹر قریبی ہسپتالوں تک منتقل کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔

ڈی پی اے کے مطابق ٹیلی وژن فوٹیج میں یہ بھی دیکھا جا سکتا ہے کہ صرف درمیانی بوگیاں ہی پٹری سے اُتریں، جس کا مطلب ہے کہ یہ حادثے کی وجہ ریلوے سوئچ کی خرابی ہے۔

اس حادثے میں زخمی ہونے والے ایک مسافر نے مقامی میڈیا کو بتایا، ’’سب کچھ ٹھیک ٹھاک جا رہا تھا، اچانک ٹرین نے جھٹکے لینا شروع کر دیے، پھر ہم نے ایک زور دار آواز سنی اور بوگیاں پٹری سے اُتر گئیں۔‘‘

حادثے کے فوری بعد پولیس اور آگ بجھانے والے عملے کے علاوہ تفتیش کار بھی فوری طور پر جائے حادثہ پر پہنچے اور انہوں نے حادثے کی وجہ جاننے کے لیے کی جانے والی تحقیقات کے سلسلے میں ٹرین کے ڈرائیور سے سوال وجواب کیے۔ اس حادثے کے بعد میلان سے مشرق کی طرف سے جانے والی لائن پر ٹرینوں کی آمد و رفت معطل کر دی گئی۔
اٹلی میں گزشتہ ہلاکت خیز ٹرین حادثہ جولائی 2016 میں ہوا تھا جب دو ٹرینوں کے درمیان تصادم کے نتیجے میں 23 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔ یہ حادثہ اٹلی کے جنوب مشرقی شہر باری کے قریب پیش آیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email
امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے فلسطینیوں کو ایک مرتبہ پھر دھمکی دی
یورپی یونین رواں برس کے وسط تک یونین میں پناہ کے یکساں قوانین بنانے کی کوشش

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Translate News »