آرمی چیف جنرل قمر جاویدباجوہ کی امیر قطر شیخ تمیم بن حمد الثانی سےملاقات     No IMG     تحریک انصاف ملک کو حقیقی حقیقی فلاحی ریاست اور نچلے طبقے کو اوپر لائیں گے:وزیر اعظم عمران خان     No IMG     صرافہ مارکیٹ میں سونے کی فی تولہ قیمت میں 1450 روپے کا اضافہ     No IMG     برٹش ائیر ویز جون 2019ءمیں پاکستان سے دوبارہ پروازیں شروع کرنے کا اعلان     No IMG     ریاست کی خود مختاری اور علاقائی سالمیت کا تحفظ کیا جائے گا,وزیر خارجہ     No IMG     چیف جسٹس میاں ثاقب نثار اور ترک صدر کے مابین ملاقات     No IMG     سعودی عرب نے سعودی صحافی جمال خاشقجی کے قتل سے متعلق امریکی سینیٹ کی قرارداد کو مسترد کردیا     No IMG     سابق سینیٹر اور پیپلز پارٹی کے رہنما فیصل رضا عابدی پر انسداد دہشت گردی کی عدالت نے فردجرم عائد کر دی     No IMG     مقبوضہ کشمیر میں نوجوانوں کی شہادت پراحتجاجی مارچ     No IMG     چیف جسٹس آف پاکستان کا دورہ تُرکی ,تُرک کمپنی نے ڈیمز فنڈ میں عطیہ دے دیا     No IMG     وینزویلا سے تعلق رکھنے والی 25 سالہ نوجوان لڑکی نے ملکہ حسن کا ٹائٹل جیت لیا     No IMG     حزب اللہ کی ايک اور سرنگ دريافت ,اسرائیلی فوج کا دعوی     No IMG     عوام اپنے مسائل کے حل کیلیے وزیر اعظم کمپلینٹ پورٹل کا استعمال کریں،وزیراعظم     No IMG     سابق صدر آصف زرداری نے پنجاب کی بجلی بند کرنے کی دھمکی دے دی     No IMG     رشوت کا سب سے بڑا ناسور پٹواری ہیں, چیف جسٹس     No IMG    

انتہائی تشویشناک خبرسابق صدر جنرل (ر) پرویز مشرف کے دل کی شریان بند ، بیماری بڑھ گئی
تاریخ :   11-10-2018

لاہور( ورلڈ فاسٹ نیوزفاریو ) سابق صدر جنرل (ر)پرویز مشرف رعشہ کی بیماری میں مبتلا ہو گئے ہیں اس کے نتیجے میں ان کی صحت دن بدن گر رہی ہے۔یہ انکشاف دبئی میں موجود سابق صدر کے قریبی دوست نے کیا ہے۔ذرائع کے مطابق سابق صدر پرویز مشرف کو ریڑھ

کی ہڈی میںفریکچر سمیت دیگر امراض پہلے ہی لاحق تھے تاہم اس نئی بیماری نے نہ صرف ان کی سرگرمیاں اور مشکل میں محدود کر دیا بلکہ اپنے کام سے جسم کے ساتھ وہ درست طریقے سے مختلف اشیاء اٹھانے میں بھی خاصی دقت محسوس کرتے ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ تقریباً چار سال قبل پرویز مشرف کو ریڑھ کی ہڈی کے مہروں میں تکلیف کے علاوہ ایک شریان بند ہونے،ایککندھے کا درست طریقے سے کام نہ کرنے،گھٹنے میں تکلیف اور ہائپرٹینشن سمیت دیگر امراض کی تشخیص ہوئی تھی۔ان بیماریوں کی تصدیق آرمڈ فورسز انسٹیٹیوٹ آف کارڈیالوجی راولپنڈی نے اپنی میڈیکل رپورٹ میں کی تھی۔جو 2014 میں ایک لفافے میں بند کرکے خصوصی عدالت کےجج کو پیش کی گئی تھی۔تقریباً ڈیڑھ ہفتہ قبل سابق صدر کے قریبی ساتھی ڈاکٹر امجد نے میڈیا کو بتایا تھا کہ پرویز مشرف کو نئی بیماری لاحق ہوگئی ہے اور اس کے علاج کے لیے انہیں ہر تین ماہ بعد لندن جانا پڑتا ہے۔ڈاکٹرا مجد نے اس بیماری کا نام بتانے سے انکار کر دیا تھا تاہم ان کا کہنا تھا کہ ابتدائی طور پر پرویز مشرف کی بیماری تشخیص کے سبب ان کے ہاتھ پر بری طرحلرزتے ہیں۔یہاں تک کہ انہیں اپنا موبائل فون اٹھانے میں بھی مشکل پیش آرہی ہے۔ریشے کی بیماری آہستہ آہستہ انسان کے مرکزی نروس سسٹم کو تباہ کر دیتی ہے اور اس کے نتیجے میں پورے جسم پر نشہ طاری ہو جاتا ہے۔مشرف کی صحت کے حوالے سے ان کے ایک دیرینہ دوست جو کہ پرویز مشرف کی طرح ریٹائرڈ زندگی گزار رہے ہیں ان کا کہنا ہے کہ کچھ عرصہ قبل دبئی میں میری پرویز مشرف سے ملاقات ہوئی وہ اہلیہ کے ساتھ بیٹھے تھے۔دعا سلام کے بعد انہوںنے کھانے کے لئے اصرار کیا،میں ان کے ساتھ والی کرسی پر بیٹھ گیا۔کھانے کے دوران جب انہوں نے مجھے پانی کا گلاس دینے کی کوشش کی تو میں نے دیکھا کہ ان کا ہاتھ اس قدر لرز رہا تھا کہ گلاس اٹھایا نہیں جا رہا تھا۔یہ دیکھ کر میں نے فوری طور پر اپنا ہاتھ آگے بڑھا کر گلاس تھام لیا۔

Print Friendly, PDF & Email
صدرِ پاکستان عارف علوی نے جسٹس شوکت عزیز صدیقی کو عہدے سے ہٹانے کی منظوری دے دی
ملکی زرِمبادلہ کے ذخائر میں کمی کا سلسلہ جاری
Translate News »