الیکشن2018میں پاک فوج کواہم ذمہ داری سونپ دی گئی     No IMG     ڈپٹی کمشنر گلگت سمیع اللہ فاروق نے کہا کہ گلگت شہر میں گوشت کی قلت دور کرنے کیلئے پہلی گوشت سپلائی کرنے والی کمپنی میٹ مارٹ کا افتتاح     No IMG     افغانستان میں سرگرم دہشت گرد تنظیم طالبان نے رمضان المبارک میں جنگ بندی کی اپیل مسترد     No IMG     بھارتی وزیر اعظم نے کشمیر میں کشن گنگا ڈیم کا افتتاح کردیا     No IMG     یورپی یونین کی ایران کومشترکہ ایٹمی معاہدےکو جاری رکھنے کے لیے تیار     No IMG     بھارتی وزیر اعظم کا دورہ کشمیر مظالم پر پردہ ڈالنے اور عالمی رائے عامہ کو گمراہ کرنے کی کوشش ہے، یاسین ملک     No IMG     نریندر مودی کا مقبوضہ کشمیر کا دورہ ایک فوجی آپریشن سے زیادہ کچھ نہیں تھا، کل جماعتی حریت کانفرنس ، سید علی گیلانی     No IMG     مسلم لیگ فنکشنل کی خاتون رکن نصرت سحر عباسی نے طیش میں آکر ڈپٹی اسپیکر شہلا رضا کو جوتا دکھا دیا     No IMG     لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ شاہد عزیز کے بیٹے نے والد کی موت کی خبروں کی تردید کر دی     No IMG     بھارت نے پاکستان میں تعینات رہنے والی اپنی ہی سفارت کار کو ’جاسوس‘ قرار دے دیا     No IMG     جڑانوالہ تحصیل چیرمین پرائس و کوالٹی کنٹرولر این اے 102 نے بھرپور الیکشن کمپین مھم جاری     No IMG     جڑانوالہ کا قدیمی ریلوے اسٹیشن انتظامیہ کی عدم توجہی کی بهینت چڑه گیا     No IMG     نوشہرہ ورکاں ملک محمد اکبر ولد محمد رمضان نے پیسوں کے  لین دین کے تنازعہ سے تنگ آکر زہریلی گولیاں کھا کر خود کشی کر لی     No IMG     شہبازشریف سرجیکل ٹاوربند رکھنےپرعوام سےمعافی مانگیں,چودھری پرویزالٰہی     No IMG     ترکی کے شہر استنبول میں اسلامی سربراہی کانفرنس میں اس عزم کا اعادہ کیا گیا ہے کہ بیت المقدس کی تاریخی اورقانونی حیثیت کےتحفظ کے لیے ہرممکن اقدامات اٹھائے جائیں گے۔     No IMG    

امریکی سینیٹ نے امیگریشن نظام میں اصلاحات سے متعلق وہ چاروں بِل مسترد کردیے
تاریخ :   16-02-2018

واشنگٹن(ورلڈ فاسٹ نیوز فار یو) امریکی سینیٹ نے امیگریشن نظام میں اصلاحات سے متعلق وہ چاروں بِل مسترد کردیے ہیں جن پر ایوان میں رواں ہفتے بحث ہوتی رہی تھی۔

چاروں بِلز کا مقصد ان لاکھوں نوجوان تارکینِ وطن کو تحفظ فراہم کرنا تھا جو اپنے والدین کے ہمراہ غیر قانونی طریقے سے امریکہ آئے تھے اور جن کے امریکہ میں قیام کی اجازت پانچ مارچ کو ختم ہورہی ہے۔

جمعرات کی شب ہونے والی رائے شماری میں ایوان نے جن چار مجوزہ قوانین کو مسترد کیا ہے ان میں سے دو 16 ڈیموکریٹ اور ری پبلکن ارکان نے مشترکہ طور پر پیش کیے تھے۔

ان میں سے ایک مجوزہ قانون ان نوجوان تارکینِ وطن کو کئی برسوں پر مشتمل طریقۂ کار کے تحت امریکی شہریت دینے سے متعلق تھا جب کہ دوسرے میں صدر ٹرمپ کی جانب سے سے تجویز کردہ سخت بارڈر کنٹرول اور ان شہروں کے خلاف کریک ڈاؤن کے لیے فنڈ مختص کرنے کی تجاویز شامل تھیں جو غیر قانونی تارکینِ وطن کے خلاف کارروائی میں وفاقی اداروں کے ساتھ تعاون سے انکار کریں۔

ان دونوں بِلز کے حق میں 100 رکنی سینیٹ میں صرف 39 ووٹ آئے جس پر وائٹ ہاؤس نے سخت برہمی ظاہر کی ہے۔

جمعرات کی شب جاری کیے جانے والے ایک بیان میں وائٹ ہاؤس نے کہا ہے کہ سینیٹ کے ڈیموکریٹ ارکان نے نوجوان تارکینِ وطن کو شہریت دینے کی پیشکش صرف اس لیے مسترد کردی کیوں کہ مجوزہ قانون میں امریکی سرحدوں کی نگرانی سخت کرنے اور امیگریشن نظام میں موجود خامیوں کو دور کرنے کی بات بھی کی گئی تھی۔

امریکی حکام کے مطابق بچپن میں غیر قانونی راستے سے اپنے والدین کے ہمراہ امریکہ آنے والے نوجوان تارکینِ وطن کی تعداد لگ بھگ آٹھ لاکھ ہے جنہیں صدر اوباما کے دور میں منظور کیے جانے والے ایک قانون کے تحت امریکہ میں تعلیم اور روزگار کے حصول کی عارضی اجازت دی گئی تھی۔

تاہم صدر ٹرمپ نے گزشتہ سال یہ قانون واپس لے لیا تھا اور اس کی منسوخی کے لیے پانچ مارچ کی تاریخ مقرر کی تھی۔ اگر اس سے قبل کانگریس نے کوئی نیا قانون منظور نہ کیا تو ان نوجوانوں کو امریکہ سے بے دخلی کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*