آرمی چیف سے بحرین نیشنل گارڈ کے کمانڈر کی ملاقات     No IMG     اسرائیل کی جیل میں آگ بھڑک اٹھی، کئی کمرے جھلس گئے     No IMG     اسرائیلی فوج کی گھر گھر تلاشی15 فلسطینی شہری گرفتار     No IMG     وزیر ریلوے شیخ رشید کی نا اہلی کے لیے الیکشن کمیشن میں درخواست دائر     No IMG     فضائی حدود کی بندش، ائیرانڈیا کو کروڑوں کا نقصان     No IMG     دہشت گردی کا کوئی دین اور نسل نہیں ہوتی ,سعودی وزیر خارجہ     No IMG     ایران، عراق اور شامی افواج کے خون نے تینوں ممالک کے درمیان تعلقات کو مزید مضبوط بنایا, بشار الاسد     No IMG     آصف زرداری اور فریال تالپور کی 10 دن کے لیے حفاظتی ضمانت منظور     No IMG     سابق وزیراعلی شہباز شریف کے خلاف ایک اور انکوائری شروع     No IMG     کینیڈین وزیر اعظم جسٹس ٹروڈو نے نیوزی لینڈ میں دہشت گردی کے واقعہ کی مذمت     No IMG     روسی صدر پوتن نے کہا ہے کہ وہ روس میں کرائسٹ چرچ جیسا دہشت گرد حملہ نہیں ہونے دیں گے     No IMG     برطانوی حکام نے نیوزی لینڈ کی مسجدوں میں ہوئی دہشت گردی کی طرز پر برطانیہ میں بھی واقعات پیش آنے کا خدشہ     No IMG     نیوزی لینڈ کی پارلیمنٹ کے پہلے اجلاس کا آغاز تلاوت کلام پاک سے ہوا     No IMG     نیوزی لینڈ مساجد پر دہشت گرد حملے سے متعلق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اپنے بیان پر میڈیا کی تنقید سے برہم     No IMG     نیوزی لینڈ کی قومی فٹسل ٹیم کے گول کیپر عطا الیان بھی کرائسٹ چرچ واقعے میں شہید     No IMG    

افغان مسئلے کا حل مذاکرات ہی کے ذریعے ممکن ہے: امریکہ
تاریخ :   28-02-2018

واشنگٹن(ورلڈ فاسٹ نیوز فار یو) امریکی محکمہٴخارجہ نے کہا ہے کہ طالبان افغان قیادت میں ہونے والے مذاکرات پر تیار نہیں۔ لیکن، ترجمان نے توقع کا اظہار کیا کہ جلد طالبان اس پر رضامند ہوں گے۔

ایک سوال کے جواب میں، ہیدر نوئرٹ نے منگل کے روز اخباری بریفینگ میں بتایا کہ محکمے کی نظر طالبان کے جاری کردہ مراسلے پر پڑی ہے۔

ترجمان نے کہا کہ ’’کسی بھی امن بات چیت کے لیے لازم ہے کہ یہ افغان سربراہی اور قیادت میں ہو۔ بد قسمتی سے فی الحال ایسا نہیں لگتا کہ طالبان مل بیٹھ کر امن بات چیت‘‘ کو تسلیم کرنے پر تیار ہیں۔

اُنھوں نے کہا کہ ’’ایک طویل عرصے سے یہی ہماری پالیسی رہی ہے‘‘، اور یہ کہ ’’بدقسمتی سے اس مرحلے پر طالبان امن بات چیت کے لیے مل بیٹھ کر گفتگو پر تیار نہیں لگتے‘‘۔

نوئرٹ نے واضح طور پر کہا کہ ’’افغان مسئلے کا کوئی فوجی حل نہیں۔ بی الآخر یہ سیاسی حل ہوگا۔ اور یہ اسی وقت ہوگا جب طالبان مل بیٹھیں اور بات چیت کریں۔ یہی بہترین طریقہ ہے جس سے افغانستان میں امن آئے گا‘‘۔

بدھ کے روز کابل میں شروع ہونے والی بین الاقوامی افغان امن کانفرنس کے بارے میں، بریفنگ کے آغاز پر اپنے کلمات میں، ترجمان نے اس توقع کا اظہار کیا کہ اجلاس میں امن، سلامتی اور آپسی روابط سے متعلق موضوعات پر کھل کر بات کرنے کا موقع میسر آئے گا۔

ترجمان نے کہا کہ امن کے حصول کے حوالے سے یہ افغان قیادت کی ایک قابل ستائش کاوش ہے، جس کے نتیجے میں امن کے قیام میں مدد ملے گی۔

ہیدر نوئرٹ نے افغان عوام کی قوت برداشت اور عزم کو سراہا، جنھوں نے طویل مدت سے متعدد مہلک حملوں کا بہادری سے مقابلہ کیا ہے۔

کشمیر سے متعلق ایک سوال پر، ترجمان نے کہا کہ ’’ضرورت اس بات کی ہے دونوں فریق مل بیٹھیں اور بات چیت کریں‘‘۔ اخباری نمائندے کے مطابق، اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل نے کشمیر کے معاملے کے حل کے لیے مصالحت کی پیش کش کی ہے، اور یہ کہ اس پر محکمہٴ خارجہ کا رد عمل کیا ہوگا۔

اس سے قبل اپنے ابتدائی بیان میں، ترجمان نے بتایا کہ منگل کے روز کابل میں چوتھا امریکہ، بھارت اور افغانستان سہ فریقی اجلاس منعقد ہوا جس میں آپسی تعاون کو فروغ دینے، امن و استحکام کے امور اور افغانستان کی ترقی و خوشحالی پر گفت و شنید ہوئی، جس میں تینوں ملکوں کے وفود نے تعلقات کو مزید فروغ دینے پر اتفاق کیا۔ اگلا سہ فریقی اجلاس اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے ستمبر میں ہونے والے اجلاس کے دوران نیو یارک میں ہوگا۔

Print Friendly, PDF & Email
مقبوضہ کشمیرمیں غیر قانونی طورپر نظربند کل جماعتی حریت کانفرنس کے سینئررہنما مسرت عالم بٹ سرینگر کی عدالت میں پیشی کے بعد دوبارہ کوٹ بھلوال جیل منتقل
سر عام پھانسی دینے کی تجویز کا معاملہ 6مارچ تک ملتوی کر دیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Translate News »