پاکستان کو کشمیر نہیں چاہیے ہمارے سیاستدان تو اپنے 4 صوبے نہیں سنبھال سکتے۔شاہد خان آفریدی     No IMG     چین میں متعدد پاکستانیوں کی بیگمات گرفتار     No IMG     ساہیوال میں کارروائی کے دوران 3 دہشت گرد گرفتار     No IMG     فیصل آباد میں وکلاء کا احتجاج     No IMG     اوورسیز پاکستانیوں کیلئے نیا پاکستان کالنگ ویب پورٹل کا افتتاح     No IMG     بلوچستان ریلوے کی بہتری کیلئے انقلابی اقدامات کئے جارہے ہیں, وفاقی وزیر ریلوے     No IMG     اسمبلی کی تقریر کو عدالت میں بطور ثبوت پیش نہیں کیا جا سکتا,سابق وزیر اعظم     No IMG     اسرائیلی فوج ’فوری طور پر حملے بند, کرے، ترکی     No IMG     یورپی فوج‘ تشکیل دی جائے ,چانسلر انگیلا میرکل     No IMG     ترکی میں مہاجرین کی کشتی ڈوبنے سے 3 بچوں سمیت 5 افراد ہلاک     No IMG     آرمی چیف کی زیر صدارت کمانڈرز کانفرنس     No IMG     ٹریفک کےمختلف حادثات میں 7 افراد جاں بحق     No IMG     اسٹاک مارکیٹ میں کاروباری سرگرمیوں کے آغاز کے ساتھ ہی مندی کا رحجان     No IMG     ایف بی آرنے وفاقی وزیرسائنس اینڈ ٹیکنالوجی کے خلاف تحقیقات کیلئے قائم کردہ جے آئی ٹی کو معلومات فراہم کرنے سے انکار کردیا     No IMG     نیب ادارہ ختم کر دیا جا ئے ، اہم ترین اعلان     No IMG    

آسیہ بی بی کو بیرون ملک منتقل کرنے کے لیے اٹلی ، کینیڈا کے ٹی وی چینلز میدان میں آگئے
تاریخ :   07-11-2018

روم ( ورلڈ فاسٹ نیوزفاریو ) آسیہ بی بی کو پاکستان سے باہر منتقل کرنے کے لیے اٹلی اور کینیڈا کا ٹی وی چینل میدان میں آگئے ہیں اور سپانسر کرنے کی پیشکش بھی کر دی ہے۔ تفصیلات کے مطابق اٹلی کا کہنا ہے کہ وہ آسیہ بی بی کو پاکستان سے باہر منتقل کرنے میں مدد کرے گا کیونکہ وہاں اس کی زندگی

خطرے میں ہے۔ اطالوی ریڈیو سے گفتگو کرتے ہوئے اٹلی کے نائب وزیراعظم ماٹیو سالوینی نے کہا کہ ہم آسیہ بی بی اور ان کے بچوں کا اٹلی میں یا کسی بھی یورپی ملک میں محفوظ مستقبل چاہتے ہیں۔
اس سلسلے میں ہم سے جو ہو سکا ہم کرنے کے لیے تیار ہیں۔ اس کیس پر اٹلی اور دیگر مغربی ممالک کے ساتھ محتاط رہتے ہوئے کام بھی کیا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اٹلی پاکستانی حکومت کے خلاف نہیں ہے۔
اصل دشمن تشدد، انتہا پسندی اور تعصب ہے۔ اٹلی کے نائب وزیراعظم نے کہا کہ ہم 2018ء میں رہ رہے ہیں اور یہ نہیں ہو سکتا کہ کسی مفروضے کے تحت کسی بے گناہ کی جان لے لی جائے۔

ادھر کینیڈا کے ممتاز بین المذاہب ٹی وی نے آسیہ بی بی کو سپانسر کرنے کی پیشکش بھی کر دی ہے۔ ٹی وی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر اولورنا ڈیوک نے وزیراعظم جسٹن ٹروڈیو اور وزیر خارجہ کے نام خطوط ارسال کیے جس میں زور دیا گیا کہ وہ آسیہ بی بی کا کینیڈا میں خیر مقدم کریں ۔ ان کا ٹی وی آسیہ بی بی کے خاندان کو کینیڈا میں مکمل طور پر سپانسر کرے گا۔
وزیراعظم آفس کی جانب سے بھی ٹی وی کے مالک کا خط ملنے کی تصدیق کر دی گئی ہے۔ یاد رہے کہ آسیہ بی بی کیس پر سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد ملک بھر میں احتجاجی مظاہرے اور دھرنے شروع ہو گئے جس کے بعد ملک میں امن و امان کی صورتحال خراب ہو گئی۔ حکومت نے دھرنا قائدین سے مذاکرات کر کے احتجاجی مظاہرے تو ختم کروادئے لیکن آسیہ بی بی کی جان کو تاحال خطرہ ہے جس کے پیش نظر اب آسیہ بی بی کے شوہر عاشق مسیح نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے مدد کی اپیل کی ہے اور درخواست کی ہے کہ انہیں سیاسی پناہ دی جائے۔
غیر ملکی ایجنسی رائٹرز کے مطابق آسیہ بی بی تاحال تک جیل میں ہے اور اپنی رہائی سے متعلق سرکاری دستاویزی کارروائی مکمل ہونے کے انتظار میں ہے ۔ آسیہ بی بی کی جیل میں موجودگی سے متعلق آئی جی جیل خانہ جات نے بھی تصدیق کی تھی تاہم آسیہ بی بی کو جان کے خطرے کے پیش نظر جیل میں اس کے مقام کو خفیہ رکھا گیا ۔ گذشتہ روز موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق آسیہ مسیح ملتان جیل کے ڈیتھ سیل میں قید ہیں۔
ویمن جیل میں قید آسیہ بی بی کے قریب جیل عملے کو بھی جانے سے روک دیا گیا ہے۔ جیل عملے پر آسیہ مسیح کے پاس جانے پر پابندی عائد ہے۔آسیہ مسیح کو دئے جانے والے کھانے کی بھی مکمل چیکنگ کی جاتی ہے۔ آسیہ بی بی کی نگرانی پر مامور جیل عملے کی بھی مکمل اسکروٹنی کی گئی۔ ڈیتھ سیل کی نگرانی کے لیے سی سی ٹی وی کیمرے بھی نصب ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
نیدر لینڈز میں144 مساجد کا اسلام مخالف گیرٹ وائیلڈرس کا ٹویٹر اکاؤنٹ بند کرنے کا مطالبہ
ترکی امریکہ کی ایران کے خلاف پابندیوں کی پیروی نہیں کرےگا۔,طیب اردوغان
Translate News »